دس چیزیں جن سے ہم گذشتہ ہفتے لاعلم تھے

کم کرڈیشیئن تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption امریکی اداکارہ کم کرڈیشیئن کو رواں ماہ کے اوائل میں پیرس میں لوٹا گیا تھا

1۔ کلوز پروٹیکشن سکیورٹی کنسلٹینٹس اس اصول پر کام کرتے ہیں کہ کسی گاہک کو بچانے کے لیے انھیں آٹھ سیکنڈ سے زیادہ کے فاصلے پر نہیں ہونا چاہیے۔

مزید معلومات کے لیے کلک کریں (دا گارڈیئن)

2۔ ڈونلڈ ٹرمپ کے ایک 19 سالہ حامی تن تنہا امریکی پولنگ کےاوسط کو بگاڑ رہے ہیں۔

مزید معلومات کے لیے کلک کریں (نیویارک ٹائمز)

3۔ ہر دس ہزار طلبہ کی بنیاد پر نوبیل انعام جیتنے کے معاملے میں انڈر گریجویٹس کا دنیا میں ٹاپ ادارہ پیرس کا ایکول نارمل سوپیريئرے ہے۔

مزید معلومات کے لیے کلک کریں (کوارٹز)

4۔ آپ کو ٹوئٹر کے ذریعے قانونی ٹوٹس بھیجی جا سکتی ہے۔

مزید معلومات کے لیے کلک کریں (یو ایس نیوز)

5۔ کسی خطرے سے بچنے کے لیے ہرن شمال یا جنوب کی طرف ہی بھاگتے ہیں۔

مزید معلومات کے لیے کلک کریں (سائنٹفیک امریکہ)

تصویر کے کاپی رائٹ GILLIANDAYIMAGES

6۔ قدیم یونانی مارکو پولو کے چین پہنچنے سے 1500 سال قبل وہاں پہنچ چکے ہوں گے۔

مزید معلومات کے لیے کلک کریں

7۔ نیویارک کے اپر ایسٹ سائڈ میں صدام حسین کا ایک خفیہ 'قید خانہ' تھا۔

مزید معلومات کے لیے کلک کریں (نیویارک پوسٹ)

8۔ آپ کے ڈاکٹر کا سیاسی میلان ان کے تجویز کردہ علاج پر اثر انداز ہو سکتا ہے۔

مزید معلومات کے لیے کلک کریں (سلیٹ)

9۔ آپ وینائل ریکارڈز کھیلنے کے لیے پانچ ڈالر کے نئے پلاسٹک نوٹ کا استعمال کر سکتے ہیں۔

مزید معلومات کے لیے کلک کریں (این ایم ای)

10۔ سنوبورڈنگ کی ایجاد شاید ترکی میں ہوئی تھی۔

مزید معلومات کے لیے کلک کریں (آؤٹ سائڈ)

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں