بونڈ فلموں کے برعکس حقیقی زندگی میں 'کیو' ایک خاتون ہیں: ایم آئی سکس

بونڈ تصویر کے کاپی رائٹ Shutterstock
Image caption فرضی ایم آئی سکس کے جاسوس جیمز بونڈ سیریز کی فلموں میں ’کیو‘ کا کردار ہمیشہ مردوں نے ادا کیا ہے

برطانیہ کی خفیہ ایجنسی ایم آئی سکس کے سربراہ نے انکشاف کیا ہے کہ جیمز بونڈ کی فلموں میں معروف کردار 'کیو' حقیقی زندگی میں ایک خاتون ہیں۔

ایم آئی سکس کے سربراہ ایلکس ینگر ایک ایوارڈ تقریب سے خطاب کر رہے تھے جہاں ٹیکنالوجی کے میدان میں خواتین کو سراہا گیا تھا۔

'بونڈ اِن موشن'

انھوں نے کہا: 'مجھے یہ بتاتے ہوئے بہت خوشی محسوس ہو رہی ہے کہ حقیقتاٌ ہمارے ادارے میں کیو ایک خاتون ہیں اور وہ آپ سب سے ملنے کے لیے انتظار کر رہی ہیں۔'

جیمز بونڈ کی فلموں میں 'کیو' خفیہ ادارے میں ٹیکنالوجی کے ماہر کا کردار ہے اور ہمیشہ سے کسی مرد نے اس کردار کو ادا کیا ہے۔

ایلکس ینگر نے کہا کہ ان کے ادارے کی ہمیشہ سے کوشش رہی ہے کہ بہتر سے بہتر لوگوں کو ایم آئی سکس میں نوکریاں دی جائیں لیکن 'ہمیں بونڈ فلموں کے تاثر سے نکلنا ہوگا۔'

انھوں نے اس بات کا اعتراف کیا کہ ایم آئی سکس سے تعلق رکھنے والے فرضی کردار جیمز بونڈ کی فلمیں دیکھ کر لگتا ہے کہ ہمارا ادارہ حقیقت کے مقابلے میں کہیں زیادہ بڑا ہے لیکن ان فلموں سے 'ایسا ظاہر ہوتا ہے کہ ایم آئی سکس میں کام کرنے والے افراد کا تعلق صرف ایک خاص طبقے سے ہوتا ہے یا وہ اوکسفورڈ یونیورسٹی سے پڑھے ہوئے ہوتے ہیں۔‘

ہم اس بات پر زور دینا چاہتے ہیں کےاس بات کے قطع نظر ان کا پس منظر کیا ہے، ’ہمارے ادارے میں کوئی بھی شخص کام کر سکتا ہے۔'

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں