2017 کی بہترین فلکیاتی تصاویر

اس سال کی فلکیاتی تصاویر کے مقابلے کی چند فاتح تصاویر، جن میں آرٹیم میرونوف کی یہ گرد و غبار کے بادل کی تصویر پہلا انعام بٹورنے میں کامیاب ہو گئی۔

line

ستارے اور گیس کے بادل

میرونوف نے ستارے اور گیس کے بادل کی زمرے میں پہلے انعام کے ساتھ ساتھ مجموعی طور پر بھی پہلے نمبر پر آتے ہوئے انسائٹ ایسٹرونومر آف دا ایئر 2017 کا انعام حاصل کیا۔ انھوں نے یہ تصویر افریقی ملک نمیبیا میں کھینچی۔ یہ بادل زمین سے 400 نوری سال کے فاصلے پر واقع ہے۔

،تصویر کا ذریعہArtem Mironov

،تصویر کا ذریعہAndras Papp

ہم دن کو 24 گھنٹوں کا سمجھتے ہیں لیکن اس کی اصل مدت 23 گھنٹے، 56 منٹ اور چار سیکنڈ بنتی ہے، کیونکہ یہ وہ وقت ہے جو زمین کو اپنے محور پر ایک چکر پورا کرنے میں لگتی ہے۔

اس تصویر میں اس دورانیے میں ستاروں کی گردش دکھائی گئی ہے۔ ستارے رات کو دائرے میں گھومتے ہیں۔ اس تصویر میں کیمرے کا شٹر کھلا رکھ کر ان کی حرکت کو ریکارڈ کیا گیا ہے۔

اینڈراس پراپ کی اس تصویر کو دوسرا انعام ملا۔

قطبی روشنیاں

مکیل بائٹر نے گذشتہ اکتوبر میں آئس لینڈ میں قطبی روشنیوں کی یہ تصویر لے کر اس کے زمرے میں پہلا انعام حاصل کیا۔

،تصویر کا ذریعہMikkel Beiter

قطبی روشنیوں کے زمرے میں دوسرا انعام کپل نوریو نے حاصل کیا۔ یہ تصویر انھوں نے سائبیریا کے ایک جنگل میں کھینچی۔

،تصویر کا ذریعہKamil Nureev

کہکشائیں

اولیگ بریگالوف نے چکردار کہکشاں میسییر 63 کی یہ شاندار تصویر لی۔

یہ تصویر لینے کے لیے انھیں بلغاریہ کا سفر کرنا پڑا۔

،تصویر کا ذریعہOleg Bryzgalov

برائزاکوف کو یہ تصویر کھینچنے کے لیے بارش اور برف سے مقابلہ کرنا پڑا۔

،تصویر کا ذریعہBernard Miller

برنارڈ ملر نے این جی سی 7331 نامی اس کہکشاں کی تصویر کھینچی جو زمین سے چار کروڑ نوری سال کے فاصلے پر واقع ہے۔

ہمارا چاند

یہ فاتح تصویر چاند کی سطح کی زبردست منظر کشی کرتی ہے۔ اس میں جو گڑھے نظر آ رہے ہیں وہ دس کروڑ سال پرانے ہیں۔

،تصویر کا ذریعہLaszlo Francsics

اس زمرے میں دوسرے نمبر پر آنے والی یہ تصویر ڈیلپلیکش بوریل نے کھیچی۔

،تصویر کا ذریعہJordi Delpeix Borrell

ہمارا سورج

نو مئی 2016 کو سیارہ عطارد سورج کے آگے سے گزرا، جسے الیگزینڈرا ہارٹ نے اپنے کیمرے میں محفوظ کر لیا۔ عطارد اس تصویر میں ایک سیاہ دھبہ دکھائی دے رہا ہے۔

،تصویر کا ذریعہAlexandra Hart

لوگ اور خلا

یوری زویزدنی کی اس تصویر میں لوگوں کو ارجنٹینا میں کہکشاں کا نظارہ کرتے دکھایا گیا ہے۔

،تصویر کا ذریعہYuri Zvezdny

اس زمرے میں دوسرے نمبر پر آنے والی تصویر جو کرٹ لاسن نے کیلی فورنیا کی یوسیمیٹی نیشنل پارک میں لی۔

،تصویر کا ذریعہKurt Lawson

تصویر میں ایک جو روشنی نظر آ رہی ہے جو ایک کوہ پیما ہے جو چوٹی پر چڑھ رہا ہے۔

سیارے، سیارچے

راجر ہچنسن نے سیارہ زہرہ کی یہ تصاویر چھ ماہ کے عرصے میں لیں جن میں زہرہ کا چاند کی طرح گھٹنا بڑھنا ریکارڈ کیا گیا ہے۔

،تصویر کا ذریعہRoger Hutchinson

آسمان

ژونگ وو کی اس تصویر میں مائلی برفانی کوہستان نظر آ رہا ہے، جو چین کے صوبے یونان کا بلند ترین پہاڑ ہے۔

یہ پہاڑ بودھوں کے نزدیک مقدس گردانا جاتا ہے۔

،تصویر کا ذریعہZhong Wu

تصاویر بشکریہ انسائٹ ایسٹرانومی فوٹوگرافر آف دا ایئر۔