فیس بک کی مالیت ’پچانوے ارب ڈالر‘

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters

سماجی رابطے کی مقبول ویب سائٹ فیس بک اپنے شیئرز یا حصص کی عوام کو فروخت شروع کر رہی ہے۔

حصص کے فروخت سے کمپنی کی مالیت پچاسی سے پچانوے ارب ڈالر تک ہو جائے گی۔

فیس بک کی جانب سے عوام ابتدائی طور پر فروخت کیے جانے والے فی شیئر کی مالیت اٹھائیس سے پینتیس ڈالر ہو گی۔

یہ کسی انٹرنیٹ کمپنی کے حصص کی سب سے بڑی فروخت ہوگی۔

سال دو ہزار چار میں ایک اندازے کے مطابق گوگل کی مالیت تئیس ارب ڈالر تھی۔

فیس بک نے امریکی حصص بازار نیسڈک میں اپنا اندراج کرایا ہے جہاں پر سیسکو سسٹمز اور ایمیزون اس کے حریف ہونگے۔

خیال کیا جا رہے کہ فیس بک اپنے حصص کی فروخت کی مہم کا آغاز سوموار سے شروع کرے گی اور اٹھارہ مئی سے اس کے حصص کی فروخت شروع ہونے کی توقع ہے۔

آٹھ سال پہلے شروع ہونے والی ویب سائٹ فیس بک کے اس وقت نوے کروڑ صارف ہیں اور گزشتہ سال اس کا منافع ایک ارب ڈالر تھا۔

اب فیس بک کا دس فیصد کاروبار عوام میں فروخت کیا جا رہا ہے اور اس سے بارہ ارب ڈالر حاصل ہونے کی توقع ہے۔

اسی بارے میں