امریکہ:ایڈز سے بچاؤ کی دوا کی حمایت

ٹروویدا تصویر کے کاپی رائٹ AP
Image caption بعض ماہرین کا کہنا ہے کہ یہ دوائی ایچ وائی ایڈز کے علاج کے لیے سنگ میل کی حیثیت اختیار کرسکتی ہے

امریکہ میں صحت کے شعبے سے تعلق رکھنے والے ماہرین کے ایک پینل نے پہلی بار ایک ایسی دوائی کی حمایت کی ہے جو صحت مند انسانوں میں ایچ آئی وی یا ایڈز کے انفیکشن کو روکنے میں مدد فراہم کرتی ہے۔

امریکی پینل نے ایسے افراد جن میں ایڈز وائرس پھیلنے کا زیادہ خطرہ پایا جاتا ہے کو ’ٹروویدا‘ نامی دوائی استعمال کرنے کی منظوری دی ہے۔

امریکی فوڈ اینڈ ڈرگ ایڈمنسٹریشن اس پینل کے مشورے پر عمل کرنے کی پابند نہیں تاہم وہ عام طور پر ایسا کرتی ہے۔

دوسری جانب امریکہ میں ایچ آئی وی کمیونٹی میں صحت کے شعبے سے متعلق چند کارکنوں اور گروپوں نے اس دوائی کی منظوری کی مخالفت کی ہے۔

بی بی سی نامہ نگاروں کا کہنا ہے کہ یہ دوائی ایچ آئی وی ایڈز کے علاج کے سلسلے میں ایک سنگِ میل کی حیثیت اختیار کر سکتی ہے۔

امریکی فوڈ اینڈ ڈرگ ایڈمنسٹریشن ایچ آئی وی میں مبتلا افراد کے علاج کے لیے پہلے ہی ٹروویدا کی منظوری دے چکی ہے۔

سنہ دو ہزار دس میں کی جانے والی تحقیق سے پتہ چلا ہے کہ ٹروویدا کے استعمال سےصحت مند افراد میں ایچ آئی وی میں کمی ہوئی ہے۔

امریکہ کی اینٹی وائرل ڈرگس ایڈوائزی کمیٹی نے تین کے مقابلے میں انیس ووٹوں سے اس دوائی کی منظوری دی۔

امریکی فوڈ اینڈ ڈرگ ایڈمنسٹریشن اس بارے میں پندرہ جون تک فیصلہ کرے گی۔

اسی بارے میں