فیس بک کے حصص کی فروخت کا معتدل آغاز

Image caption زکربرگ نے ویڈیو لنک کے ذریعے نیویارک سٹاک ایکسچینج میں کاروبار کے آغاز کی روایتی تقریب میں شرکت کی

امریکی شہر نیویارک کے بازارِ حصص میں سماجی روابط کی مقبول ترین ویب سائٹ فیس بک کے حصص کی خرید و فروخت کا پہلا دن معتدل رہا اور اس کے حصص اندازے سے معمولی زیادہ اڑتیس اعشاریہ دو تین ڈالر فی شیئر پر فروخت ہوئے۔

جمعہ کو کاروبار کے آغاز کے ساتھ ہی فیس بک کے جس شیئر کی ابتدائی قیمت اڑتیس ڈالر رکھی گئی وہ قیمت تینتالیس ڈالر تک پہنچ گئی۔

تاہم بعد میں حصص کی قیمت چالیس ڈالر اور پھر ٹریڈنگ کے اختتام پر اڑتیس اعشاریہ دو تین ڈالر فی شیئر پر بند ہوئی۔

فیس بک کے حصص کی خرید و فروخت میں تکنیکی خرابی کی وجہ سے تقریباً تیس منٹ کی تاخیر ہوئی، ماہرین کے مطابق اس سے ظاہر ہوتا ہے کہ شیئرز کی کتنی طلب ہے۔

اس سے قبل فیس بک کے بانی مارک زکربرگ نے نیسڈیک میں جمعہ کے دن کا کاروبار شروع ہونے کا باقاعدہ اعلان کیا۔

کیلیفورنیا میں فیس بک کے ہیڈکوارٹر میں موجود زکربرگ نے ویڈیو لنک کے ذریعے نیویارک سٹاک ایکسچینج میں کاروبار کے آغاز کی روایتی تقریب میں شرکت کی۔

نیویارک کے بازارِ حصص میں فروخت کے لیے پیش کیے جانے والے فیس بک کے ہر شیئر کی قیمت اڑتیس ڈالر طے کی گئی ہے اور اس لحاظ سے اس آٹھ سال پرانی کمپنی کی قدر ایک سو چار ارب ڈالر ہوگی۔

ابتدائی طور پر فیس بک کے چار سو اکیس ملین حصص کا تقریباً پانچواں حصہ فروخت کے لیے پیش کیا گیا ہے اور اس فروخت سے کمپنی کو سولہ ارب ڈالر حاصل ہوں گے۔

فیس بک کہہ چکی ہے کہ بازار میں موجود طلب کو دیکھتے ہوئے وہ پہلے سے طے شدہ حصص سے پچیس فیصد سے زیادہ حصص فروخت کرے گی۔

Image caption فیس بک کے اس وقت نوے کروڑ صارف ہیں اور گزشتہ سال اس کا منافع ایک ارب ڈالر تھا

تاہم یہ حصص حاصل کرنے والے افراد کمپنی کے چلانے میں زیادہ کردار ادا نہیں کر سکیں گے۔ اس کی وجہ فیس بک کی جانب سے فروخت کے لیے پیش کیے جانے والے حصص کو دو اقسام میں بانٹنا ہے۔

ایک قسم کے حصص کو ’اے شیئر‘ کا نام دیا گیا ہے جس کا ایک ووٹ ہو گا جبکہ کمپنی کے موجود مالک کے حصص کو ’بی شئیر‘ کا نام دیا گیا ہے جس کے مطابق ہر شیئر کے دس ووٹ ہوں گے۔

پبلک لسٹنگ کے بعد بی شیئرز کمپنی کے چھیانوے فیصد سے زائد حصے پر کنٹرول حاصل کر لیں گے جس میں فیس بک کے بانی مارک زکربرگ کا حصہ چھپن فیصد کے قریب ہوگا۔

کمپنی کی جانب سے دی گئی معلومات کے مطابق فیس بک کے بانی مارک زکربرگ کمپنی کے پچیس فیصد حصے کے مالک ہیں۔

آٹھ سال پہلے شروع ہونے والی ویب سائٹ فیس بک کے اس وقت نوے کروڑ صارف ہیں اور گزشتہ سال اس کا منافع ایک ارب ڈالر تھا۔

اسی بارے میں