چڑیوں کے گھونسلوں میں سگریٹ کے فلٹرز

آخری وقت اشاعت:  جمعرات 6 دسمبر 2012 ,‭ 11:29 GMT 16:29 PST

مکسیکو سٹی میں پرندے سگڑیٹوں کے فلٹرز جمع کرتے ہیں

ایک تحقیق سے معلوم ہوا ہے کہ پرندے اپنے گھونسلے کو گرم اور کیڑوں سے محفوظ رکھنے کے لیے سگریٹ کے ’بٹ‘ یعنی فلٹرز کا استعمال کرتے ہیں۔

سینٹ اینڈریوز یونیورسٹی میں کی جانے والی ایک تحقیق کے مطابق سگریٹ کے فلٹروں میں موجود ’نکوٹین‘ اور دیگر کیمیائی مواد قدرتی طور پر کیڑا شکن کے طور پر کام کرتے ہیں۔

ساتھ ہی ’سیلولوز‘ کے بنے ہوئے فلٹرز گھونسلے کو سردی سے بچانے میں بھی کارآمد ہوتے ہیں۔

جنگلی پرندے اپنے گھونسلے کو کیڑوں سے بچانے کے لیے مخصوص کیمیائی مادہ خارج کرنے والے پودوں کا استعمال بھی کرتے ہیں۔

اس تحقیق میں سائنسدانوں نے میکسیکو سٹی میں عام اور زرد چڑیوں کے گھونسلوں کا جائزہ لیا جن میں اوسطً دس اور زیادہ سے زیادہ سگریٹ کے اڑتالیس فلٹر موجود تھے۔

دونوں قسم کی چڑیوں کے جن گھونسلوں میں زیادہ سگریٹ کے فلٹرز موجود تھے ان میں ہی کیڑوں کی تعداد قدرے کم تھی۔

ان فلٹروں کی کیڑا شکن خصوصیات کو آزمانے کے لیے محققین نے نئے اور استعمال شدہ سگریٹوں کے فلٹرزگھونسلوں میں لگائے۔

ان کے ساتھ بیٹری سے چلنے والے ’تھرمل‘ شکنجے لگائے گئے ہیں جو کہ حرارت سے کیڑوں کو گھونسلوں کی طرف راغب کرتے ہیں۔ جن سگریٹ کے فلٹروں میں نکوٹین والے فلٹر تھے، ان میں کہیں کم کیڑے آئے۔

رائل سوسائٹی کے جریدے بائیولوجی لیٹرز میں محققین کا کہنا تھا کہ ’ہم یہ ثابت کر رہے ہیں کہ شہری علاقوں کے پرندے استعمال شدہ سگریٹ کے فلٹرز میں موجود سیلولوز اپنے گھونسلے میں لگاتے ہیں اور اس اقدام کا مقصد گھونسلے میں آنے والے کیڑوں کی تعداد میں کمی کرنا ہے۔‘

انہوں نے اس بات کی طرف بھی اشارہ کیا کہ نکوٹین کیڑوں کے خلاف قدرتی دفاعی کیمیائی مادے کے طور پر کام کرتا ہے۔

نکوٹین کو کھیتوں اور مرغیوں کے فارموں میں بھی کیڑوں کے خلاف استعمال کیا جاتا ہے۔

سائنسدانوں کا کہنا تھا کہ ممکن ہے کہ یہ ایک اتفاق ہو اور پرندے سگریٹ کے فلٹروں کا استعمال صرف گھونسلے میں سردی کم کرنے کے لیے کر رہے ہوں۔

اس بات کا تعین کرنے کے لیے کہ کیا پرندے استعمال شدہ یا غیر استعمال شدہ سگریٹ کے فلٹروں میں فرق کرتے ہیں، سائنسدانوں کا کہنا ہے کہ مزید تحقیق کرنا ہوگی۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔