جنوبی کوریا میں’سائبر حملے‘ کی تحقیقات

آخری وقت اشاعت:  بدھ 20 مارچ 2013 ,‭ 11:05 GMT 16:05 PST

نیٹ ورک جزوری یا مکمل طور پر مفلوج ہو گئے تھے: حکام

جنوبی کوریا میں حکام ایک مشتبہ سائبر حملے کی تحقیقات کر رہے ہیں جس نے ملک کے بینکوں اور براڈکاسٹ نیٹ ورکس کے نظام کو مفلوج کر کے رکھ دیا تھا۔

براڈکاسٹر کی بی ایس، ایم بی ایس اور وائے این این نے پولیس کو بتایا کہ ان کے نیٹ ورک مقامی وقت کے مطابق دو بجے کے قریب رک گئے۔

اس کے علاوہ دو بینکوں شنہان اور نوگہوپ کا بھی کہنا ہے کہ ان کے نیٹ ورک متاثر ہوئے ہیں۔

ابھی تک ان نیٹ ورک کے مفلوج ہونے کی وجوہات کے بارے میں معلوم نہیں ہو سکا، گذشتہ ہفتے شمالی کوریا نے جنوبی کوریا، امریکہ اور ان کے حلیف ممالک کے کمپیوٹرز سرورز پر حملے کی دھمکی دی تھی۔

جنوبی کوریا میں انٹرنیٹ سکیورٹی کی ایجنسی کا کہنا ہے کہ نیٹ ورک جزوری یا مکمل طور پر مفلوج ہو گئے تھے۔

ایک پولیس اہلکار نے فرانسیسی خبر رساں ادارے اے ایف پی کو بتایا کہ’ یہ وسیع پیمانے پر رونما ہونے والا واقعہ ہے اور شواہد جمع کرنے میں کچھ دن درکار ہوں گے۔‘

تین براڈ کاسٹ ہاؤسز کے عملے کے مطابق مانیٹر کی سکرین پر خرابی کے ایک پیغام کے ساتھ ان کے کمپیوٹر کریش ہو گئے اور دوبارہ سٹارٹ نہیں ہوئے۔

بی بی سی کے نامہ نگار لوسی ویلیمسن کے مطابق براڈ کاسٹر اس خرابی کے باوجود اپنح نشریات جاری رکھنے میں کامیاب رہے۔

برطانوی خبر رساں ادارے رائٹرز نےجنوبی کوریا میں انٹرنیٹ سروس فراہم کرنے والی کمپنی ایل جی یوپلس کے ایک نامعلوم ترجمان کے حوالے سے بتایا ہے کہ ان کے خیال میں نیٹ ورک کو ہیک کیا گیا لیکن امریکی خبر رساں ایجنسی اے پی نےترجمان لی زنگ ہوآن کے حوالے سے بتایا کہ سائبر حملے کے کوئی آثار نہیں ہیں اور نیٹ ورک معمول کے مطابق کام کر رہا ہے۔

جنوبی کوریا کی وزارتِ دفاع کا کہنا ہے کہ’اس بات کو رد نہیں کیا جا سکتا ہے کہ اس واقعہ میں شمالی کوریا ملوث ہے۔ جنوبی کوریا کی وزارتِ انفارمیشن ٹیکنالوجی اینڈ کمپیوٹنگ کے مطابق اس واقعہ میں سرکاری اداروں کے کمپیوٹر نیٹ ورک متاثر نہیں ہوئے ہیں۔

خیال رہے کہ اس سے پہلے خیال کیا جا رہا ہے کہ جنوبی کوریا میں سال دو ہزار نو اور سال دو ہزار گیارہ میں ہونے والے سائبر حملوں میں شمالی کوریا ملوث تھا۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔