بلیک بیری بکنے کو تیار مگر خریدے گا کون؟

سمارٹ فون بنانے والی کمپنی بلیک بیری نے اصولی طور پر فیئر فیکس کی سرکردگی میں قائم ایک کنسورشیم کی جانب سے خریدنے جانے پر رضامندی کا اظہار کیا ہے۔

فیئر فیکس فائنینشل نے بلیک بیری کو 4.7 ارب ڈالر میں خریدنے کی پیشکش کی ہے جسے کمپنی نے اصولی طور پر منظور کیا۔

بلیک بیری نے ایک بیان میں کہا کہ فیئر فیکس نے، جو اس کے حصص کا دس فیصد حصہ رکھتی ہے، نو ڈالر فی حصہ ان حصص کو خریدنے کی پیشکش کی ہے۔

بلیک بیری کا کہنا ہے جب تک فیئر فیکس سے مذاکرات جاری ہیں تب تک دوسرے آپشنز پر غور جاری رہے گا۔

جمعے کو بلیک بیری نے اعلان کیا تھا کہ خسارے کو کم کرنے کے لیے 45 سو ملازمین کو فارغ کیا جائے گا۔

کینیڈا میں قائم بلیک بیری کا کہنا تھا کہ اسے ایک ارب ڈالر تک کے نقصانات کی توقع ہے جس کی وجہ اس کے موبائل فونوں کی بری کارکردگی ہے۔ بلیک بیری نے کہا ہے کہ ممکنہ فروخت کے بارے میں بات چیت صرف فیئر فیکس کے ساتھ نہیں ہو رہی بلکہ وہ سرگرمی سے دوسرے ممکنہ خریداروں کے ساتھ بات چیت اور ان کی جانب سے پیشکشوں کا جائزہ لینے میں مصروف ہے۔

فیئر فیکس کے سربراہ پریم واٹسا نے کہا کہ ’ہم سمجھتے ہیں کہ اس معاہدے سے بلیک بیری کے صارفین، ملازمین اور کیرئیرز کے لیے ایک نیا باب شروع ہو گا‘۔

بلیک بیری کے مالی حالات اس کے تازہ ترین ماڈل Z10 کی مایوس کُن فروخت کے نتیجے میں خراب ہوئے۔ اس فون کو جنوری میں متعارف کروایا گیا تھا مگر یہ صارفین کی توجہ حاصل کرنے میں ناکام رہا۔

اسی بارے میں