امریکی فوجیوں کے لیے’آئرن مین‘جیسا بکتربند لباس

Image caption امریکی فوج کا منصوبہ ہے کہ جدید جنگی بکتربند لباس آئندہ تین سال تک استعمال کرنے کے لیے دستیاب ہو

امریکی فوج ہالی وڈ کے سپر ہیرو ’آئرن مین‘ کی طرز پر ایک ہائی ٹیک بکتربند سوٹ کی تیاری کے منصوبے پر کام کر رہی ہے۔

امریکی فوج چاہتی ہے کہ جدید بکتربند لباس فوجیوں کو دیے جائیں تاکہ ان کو ’سپر ہیومن‘جیسی صلاحیت حاصل ہو سکے۔

مستقبل کی جنگیں روبوٹ لڑیں گے؟

امریکی فوج نے ٹیکنالوجی انڈسٹری، حکومتی لیبارٹریز اور تعلیمی اداروں سے کہا ہے کہ آئرن مین کی طرز کے جدید بکتربند لباس کی تیاری میں مدد کریں۔

امریکی فوج پہلے ہی ایسے بکتربند لباس کے تجربے کر رہی ہے جن کی مدد سے فوجی زیادہ وزن لے کر چلنے کے قابل ہو سکیں گے۔

جدید لباس ’ ٹیکٹیکل اسالٹ لائٹ آپریٹر سوٹ (Talos) ایک فریم جیسا ہو گا لیکن اس میں سینسرز سمیت سمارٹ آلات کا استعمال کیا جا سکے گا۔

امریکی فوج کے مطابق اس سوٹ میں وسیع وسیع نیٹ ورکنگ آلات اور گوگل کی سمارٹ عینک کی طرز پر جدید کمپیوٹرز بھی منسلک کرنے کی ضرورت ہو گی۔

سمارٹ آلات کے استعمال کی وجہ سے فوجی کے جسم کے درجہ حرات، دل کی دھڑکن اور جسم میں پانی کی مقدار پر نظر رکھی جا سکے گی۔

ہائڈرولکس نظام سے لیس سوٹ کو ٹانگوں اور بازوں سے جوڑا جا سکے گا اور اس کی مدد سے طاقت میں بے پناہ اضافہ ہو گا۔

امریکی فوج کی ریسرچ، ڈولپمنٹ اور انجینیئرنگ کمانڈ کے سینیئر مشیر لیفٹینٹ کرنل کال بورجس کے مطابق’ مختلف آلات اور نظاموں کو ایک جنگی بکتربند سوٹ میں یکجا کرنے کی ضرورت ہے، جس میں طاقت اور صحت پر نظر رکھی جا سکے اور اس میں ایک ہتھیار بھی موجود ہو‘۔

انہوں نے مزید کہا’یہ ایک جدید طرز کا بکتربند لباس ہو گا، جس میں بات چیت کے لیے کیمونیکشن اینٹینا، محسوس کرنے کی صلاحیت، سینسرز اور چھوٹے سرکٹس نصب ہونے جا رہے ہیں‘۔

امریکی فوج کے اہلکار سارجنٹ میجر کرس فارس کے مطابق’کوئی بھی انڈسٹری اس لباس کو تیار نہیں کر سکتی‘۔

اس کی بجائے امریکی فوج نے ہتھیار تیار کرنے والے اداروں، نجی صعنتوں، حکومتی لیبارٹریز اور تعلیمی اداروں سے کہا ہے کہ اس منصوبے میں مدد کی جائے۔

امریکی فوج کے مطابق اس منصوبے میں میساچوسٹس انسٹی ٹیوٹ آف ٹیکنالوجی کو شامل کیا جا سکتا ہے۔

میساچوسٹس یونیورسٹی میں ایک ٹیم نے ایک سیال بکتربند لباس تیار کیا ہے جو برقی کرنٹ ملنے سے ٹھوس شکل میں تبدیل ہو جاتا ہے۔

یونیورسٹی کے پروفیسر گریتھ میکنلی نے خبروں کی امریکی ویب سائٹ این پی آر سے بات کرتے ہوئے امریکی منصوبے کا ہالی وڈ کی مستقبل سے متعلق فلموں میں استعمال ہونے والے مختلف بکتربند لباس سے موازانہ کرتے ہوئے کہا’ یہ بالکل آئرن مین محسوس ہوتا ہے‘۔

امریکی فوج کا منصوبہ ہے کہ جدید جنگی بکتربند لباس آئندہ تین سال تک استعمال کرنے کے لیے دستیاب ہو

اسی بارے میں