ایپل کے نئے ’ ہلکے ترین آئی پیڈ ایئر‘ کی رونمائی

Image caption اس نئے آئی پیڈ کی خوبی یہ ہے کہ یہ اپنے سے پہلے آنے والے تمام آئی پیڈز سے بہت پتلا ہے

ایپل نے ایک نئی ٹیبلٹ رینج کا اعلان کیا ہے جس میں نیا آئی پیڈ متعارف کروایا گیا ہے جسے ’آئی پیڈ ایئر‘ کا نام دیا گیا ہے۔

اس نئے آئی پیڈ کی خوبی یہ ہے کہ یہ اپنے سے پہلے آنے والے تمام آئی پیڈز سے بہت پتلا ہے۔

نو اعشاریہ سات انچ کی ٹچ سکرین والا آئی پیڈ سات اعشاریہ پانچ ملی میٹر (اعشاریہ تین انچ) موٹا اور اس کا وزن چار سو انہتر گرام ہے جو کہ ایپل کے مطابق اس وقت مارکیٹ میں دستیاب تمام ٹیبلٹس میں سب سے ہلکا ہے۔

اس آئی پیڈ میں اے سیون چپ لگائی گئی ہے جو آئی فون فائیو ایس میں لگی ہوئی ہے۔

ایپل نے اس کے ساتھ آئی پیڈ منی کے نئے ورژن کی رونمائی بھی کی۔

سات اعشاریہ نو انچ کے اس آئی پیڈ کو ایپل نے ریٹینا قرار دیا ہے جس کا مطلب ہے کہ اس کی ریزولوشن بہتر ہو گی۔

ایمازون اور گوگل نے پہلے ہی چوٹی ٹیبلٹس کا اعلان کر رکھا ہے جسے ’کنڈل فائر ایچ ڈی ایکس‘ اور ’نیکسس سیون‘ جو ہائی ڈیفینیشن ڈسپلے کے ساتھ دستیاب ہوں گے۔

آئی پیڈ کے اس نئے آئی پیڈ کا اجرا ایک ایسے وقت میں کیا گیا ہے جب گوگل انڈروئیڈ کے بارے میں کہا جا رہا ہے کہ اس پر چلنے والی ٹیبلٹس ایپل کی ٹیبلٹس سے زیادہ فروخت ہونا شروع ہو جائیں گی۔

ایپل نے یہ بھی اعلان کیا کہ اس کے نئے میک آپریٹنگ سسٹم ’میورک‘ کے اپ ڈیٹ کو صارفین کو مفت فراہم کیا جائے گا۔

اس کا موازانہ اگر ونڈوز آٹھ اعشاریہ سے کیا جائے تو وہ مارکیٹ میں ایک سو پاؤنڈ کے قریب فروخت ہوتا ہے جبکہ لینکس پر بنا ہوا یوبنٹو بھی مفت فراہم کیا جاتا ہے۔

سان فرانسسکو میں ہونے والی ایک تقریب میں نئے لیپ ٹاپس، ایپس بھی متعارف کروائے گئے مگر توقع کے برعکس ایپل نے کوئی ٹی وی سیٹ باکس متعارف نہیں کروایا۔

ایپل نے اس بات کا اعتراف کیا کہ وہ ان مصنوعات سے اتنا منافع نہیں کما رہی ہے جتنا وہ سستی اور چھوٹی مصنوعات سے کماتی ہے۔

اسی بارے میں