انانیمس کے اعلانِ جنگ کا مطلب کیا ہے؟

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption ’انانیمس کے حملے کی زد میں دولت اسلامیہ کی حمایت کرنے والی ویب سائٹس اور سوشل میڈیا کمپنیاں بھی آ سکتی ہیں‘

ہیکروں کی تنظیم ’انانیمس‘ نے جمعے کو پیرس میں ہونے والے دہشت گرد حملوں کے بعد انتہا پسندوں کے خلاف ’اعلانِ جنگ‘ کر دیا ہے۔

ایک یو ٹیوب ویڈیو میں تنظیم کا مخصوص ماسک پہنے ہوئے ایک ترجمان نے پیغام دیا کہ وہ اپنے علم کو ’انسانیت کو متحد‘ کرنے کے لیے استعمال کریں گے۔

’ہم دولتِ اسلامیہ کو تباہ کر دیں گے‘

فرانسیسی زبان میں بات کرتے ہوئے انھوں نے کہا کہ دولت اسلامیہ ان سے مقابلے کے لیے تیار ہو جائے اور کہا کہ ’انانیمس تمھیں دنیا کے ہر کونے سے تلاش کر لے گی۔‘

اس تنظیم نے سال کے شروع میں فرانسیسی اخبار چارلی ہیبڈو کے دفتر پر حملے کے بعد بھی اسی طرح خبردار کیا تھا۔

تنظیم کا دعویٰ ہے کہ اس کے بعد سے اب تک وہ دولت اسلامیہ کے ہزاروں سوشل میڈیا اکاؤنٹس کو ناکارہ بنا چکی ہے۔

بی بی سی کلک کے ٹیکنالوجی ماہر ڈین سمنز اور دولت اسلامیہ پر گہری نظر رکھنے والے سکیورٹی تجزیہ کار چارلی ونٹر نے اس صورتحال پر روشنی ڈالی ہے ۔

اعلان جنگ سے کیا مراد ہے؟

اب کیا ہوگا؟ ڈین سمنز کا کہنا ہے کہ ’اس کا مطلب ہے کہ ہم شدت پسند تنظیم دولت اسلامیہ کی ویب سائٹ، یا ان کی متعلقہ ویب سائٹوں، جیسے ان کی بھرتی کی سائٹوں اور ان کی سماجی رابطوں کی سائٹوں پر مزید حملے ہوتے دیکھیں گے۔ اور اگر اس مرتبہ انانیمس نے ہیکنگ کا راستہ استعمال کیا تو اس کا مطلب ہے کہ دولتِ اسلامیہ کے رابطے متاثر بھی ہو سکتے ہیں۔‘

انھوں نے مزید کہا کہ ’انانیمس کے حملے کی زد میں دولت اسلامیہ کی حمایت کرنے والی ویب سائٹس اور سوشل میڈیا کمپنیاں بھی آ سکتی ہیں۔ اس کام کے لیے انانیمس نے مختلف لوگوں کی جانب سے مدد کی بھی حمایت کی ہے۔‘

چارلی ونٹر کہتے ہیں کہ اس کا مقصد ’دولت اسلامیہ کی کارروائیوں میں خلل ڈالنا‘ ہے۔

انھوں نےکہا کہ ’ماضی میں کسی یہ کارروائیاں کسی اکاؤنٹ کو ختم کرنے، کسی ویب سائٹ کا مواد غائب کرنے یا آئی پی ایڈریس معلوم کرنے تک محدود تھیں۔ لیکن دولت اسلامیہ کے کاموں میں خلل ڈالنا ایک اہم چیلنج ہے۔ یہ دیکھنا دلچسپ ہو گا کہ انانیمس پہلے سے زیادہ کامیابی حاصل کرتی ہے یا نہیں۔‘

اس سے دولت اسلامی کو کتنا نقصان پہنچ سکتاہے؟

چارلی ونٹر نے کہا: ’یہ مسئلے کا حل نہیں ہے۔ لیکن دولت اسلامیہ کی تشہیری مشینری میں خلل ڈال کر انھیں کچھ نہ کچھ زک تو پہنچائی جا سکے گی۔

’ان کی بھرتی کی ویب سائٹ کا اشتہار انٹرنیٹ پر ختم کیے جانے بعد بھی اکثر دوبارہ نمودار ہو جاتا ہے۔ لیکن اہم بات یہ ہے کہ انھوں نے انٹرنیٹ پر کن اہم مقامات پر اجارہ داری برقرار رکھی ہوئی ہے۔‘

’دولت اسلامیہ کے لیے یہ اکاؤنٹ بہت اہم ہیں۔‘

دوسری جانب ڈان سمنز کا خیال ہے کہ انانیمس کے پاس ان اکاؤنٹس میں خلل ڈالنے کے لیے پہلے سے زیادہ طاقت ہے۔

’یہ اس بات پر بھی منحصر ہے کہ ان ویب سائٹوں کے ختم ہونے کے بعد دولت اسلامیہ کے پاس اپنی ویب سائٹ اور سوشل میڈیا اکاؤنٹوں کو دوبارہ بحال کرنے کے لیے کتنا وقت ہے۔‘

انھوں نے پوچھا کہ ’اگر ایسا ہے تو پھر یہ فیصلہ بھی ہو جائے گا کون زیادہ طاقتور ہے، دولت اسلامیہ یا انانیمس۔‘

’ہیکروں نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ وہ تسلسل کے ساتھ زیادہ شدید حملے کریں گے۔ ہاں، یہ ممکن ہے کہ انھوں نے اپنی ویب سائٹوں کے متبادل بنائے ہوئے ہوں لیکن یہ حملے بھی ان کے لیے بڑا خلل ثابت ہو سکتے ہیں۔‘

اسی بارے میں