پاکستانی ٹیم ٹیسٹ نہ بچا سکی، سیریز میں دو صفر کی شکست

کرکٹ تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption نیوزی لینڈ نے 32 سال میں پہلی مرتبہ پاکستان کے خلاف ٹیسٹ سیریز جیتی ہے۔

پاکستان کو ہیملٹن میں نیوزی لینڈ کے خلاف دوسرے ٹیسٹ میں 138 رنز سے شکست کا سامنا کرنا پڑا ہے۔

اس فتح کے نتیجے میں نیوزی لینڈ نے دو ٹیسٹ میچوں کی یہ سیریز دو صفر سے جیت لی ہے۔ اس نے کرائسٹ چرچ میں کھیلا گیا پہلا ٹیسٹ آٹھ وکٹوں سے جیتا تھا۔

٭ تفصیلی سکور کارڈ

پاکستان کو میچ جیتنے کے لیے369 رنز کا ہدف ملا تھا لیکن میچ کے آخری پوری دن پوری ٹیم صرف230 رنز بناکر آؤٹ ہوگئی۔

اوپنرز سمیع اسلم اور اظہرعلی کی 131 رنز کی اوپننگ شراکت کے باوجود بقیہ پاکستانی کھلاڑی سکور میں صرف 99 رنز کا اضافہ ہی کر سکے۔

پاکستان کی نو وکٹیں چائے کے وقفے کے بعد صرف 72 رنز کے اضافے پر گریں جن میں سے آخری چھ نے سکور میں 16 رنز کا ہی اضافہ کیا۔

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption سمیع اسلم ایک بار پھر اپنی سنچری مکمل نہ کر سکے

پاکستانی اوپنر سمیع اسلم نے اپنی چھٹی نصف سنچری مکمل کی لیکن ایک بار پھر اسے سنچری میں تبدیل نہ کرسکے۔

انھوں نے اپنی نصف سنچری 188 گیندوں پر بنائی جو 23 سال میں کسی بھی پاکستانی اوپنر کی سب سے سست ترین نصف سنچری ہے۔

وہ 91 رنز بناکر ٹم ساؤدی کی گیند پر ولیم سن کے ہاتھوں کیچ ہوئے۔

اظہر علی 58 اور بابر اعظم 16 رنز بناکر سینٹنر کی گیندوں پر بولڈ ہوئے۔

سرفراز احمد کو بیٹنگ آرڈر میں اوپر بھیجا گیا لیکن وہ صرف 19رنز بنا کر اپنے ٹیسٹ کریئر میں پہلی مرتبہ رن آؤٹ ہوگئے۔

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption اسد شفیق ایک بار پھر ناکام رہے

اسد شفیق اس سال پانچویں مرتبہ صفر پر آؤٹ ہوئے۔ ان کی وکٹ ہینری نے نکلس کی مدد سے حاصل کی۔

آؤٹ آف فارم یونس خان کو 11 رنز پر ٹم ساؤدی نے ایل بی ڈبلیو کیا تو پاکستانی ٹیم نوشتہ دیوار پڑھ چکی تھی۔

ایک رن کے اضافے پرگرنے والی چار وکٹوں نے نیوزی لینڈ کی جیت پر مہرتصدیق ثبت کردی جن میں سے محمد عامر ۔ وہاب ریاض اور عمران خان بغیر کوئی رن بنائے ویگنر کا نشانہ بنے۔

وہاب ریاض نے پیئر حاصل کیا۔

اپنا پہلا ٹیسٹ کھیلنے والے محمد رضوان13 رنز بنا کر ناٹ آؤٹ رہے۔

ٹم ساؤدی جنھوں نے میچ میں آٹھ وکٹیں حاصل کیں مین آف دی میچ رہے۔

نیوزی لینڈ نے 32 سال میں پہلی مرتبہ پاکستان کے خلاف ٹیسٹ سیریز جیتی ہے۔ آخری مرتبہ اس نے سنہ 1985 میں پاکستان کے خلاف سیریز میں دو ٹیسٹ میچ جیتے تھے۔

نیوزی لینڈ نے پاکستان کے خلاف اب لگاتار تین ٹیسٹ میچز جیت رکھے ہیں۔ موجودہ ٹیسٹ سے قبل اس نے گذشتہ سال شارجہ میں بھی ٹیسٹ میچ جیتا تھا۔