مصباح مزید کچھ عرصہ قیادت کریں ، شہریارخان

مصاح الحق تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images

پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیئرمین شہریارخان کا کہنا ہے کہ مصباح الحق کو ابھی مزید کچھ عرصہ ٹیم کی قیادت کرنی چاہیے اور دو ٹیسٹ میچوں کی ناکامیوں پر میدان چھوڑ کر نہیں جانا چاہیے۔

واضح رہے کہ مصباح الحق نے برسبین اور میلبرن ٹیسٹ میچز میں شکست اور خود اپنی مایوس کن بیٹنگ کے بعد بین الاقوامی کرکٹ سے ریٹائرمنٹ کا عندیہ دیا تھا تاہم سڈنی ٹیسٹ سے ایک روز قبل پریس کانفرنس میں انھوں نے کہا ہے کہ یہ بات انھوں نے مایوسی کے عالم میں کردی تھی اور وہ سڈنی ٹیسٹ کھیلیں گے۔

پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیئرمین شہریارخان نے پیر کے روز کراچی میں بی بی سی اردو کو دیے گئے انٹرویو میں کہا کہ اپنے مستقبل کے بارے میں حتمی فیصلہ مصباح الحق نے کرنا ہے لیکن پاکستان کرکٹ بورڈ چاہے گا کہ وہ بحیثیت کپتان اپنی ذمہ داری جاری رکھیں۔

٭ ریٹائرمنٹ کی بات مایوسی میں کہی تھی: مصباح

٭ ’یونس اور مصباح کے متبادل موجود نہیں‘

شہریارخان نے مصباح الحق کی موجودہ بیٹنگ فارم کے بارے میں کہا کہ مصباح الحق کے ساتھ بہت کم ایسا ہوا ہے کہ ناکام ہوئے ہیں وہ بہت ہی مستقل مزاج بیٹسمین واقع ہوئے ہیں اور ظاہر ہے کہ موجودہ فارم کی وجہ سے وہ بہت ہی زیادہ مایوس ہوئے ہونگے لیکن کرکٹ میں ایسا ہوتا رہتا ہے اور دنیا کے بڑے بڑے بیٹسمینوں کی فارم متاثر ہوتی ہے ۔

شہریارخان نے کہا کہ مصباح الحق جیسے کامیاب بیٹسمین اور کامیاب کپتان کو اس طرح میدان چھوڑکر نہیں جانا چاہیے اور حالات کا مقابلہ کرنا چاہیے۔ انہیں خوشی ہے کہ مصباح الحق سڈنی ٹیسٹ کھیل رہے ہیں اور جب وہ وطن واپس آئیں گے تو ان سے ان کے مستقبل کے بارے میں بات ہوگی لیکن پاکستان کرکٹ بورڈ چاہتا ہے کہ وہ مزید کچھ اور وقت پاکستانی ٹیم کی قیادت کریں کیونکہ وہ فٹ ہیں اور بہت کامیاب رہے ہیں۔

یاد رہے کہ پاکستانی کرکٹ ٹیم کی آئندہ ٹیسٹ سیریز مارچ میں ویسٹ انڈیز کے خلاف جزائر غرب الہند میں ہے۔