جب بیٹ ہاتھ سے نکل کر وکٹ کیپر کے منہ پر جا لگا

بگ بیش لیگ تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption نیول کو یہ چوٹ بریڈ ہوگ کے بیٹ سے لگی

آسٹریلیا میں جاری ٹی ٹوئنٹی بگ بیش لیگ میں میلبرن رینیگیڈز کے وکٹ کیپر پیٹر نیول چہرے پر بیٹ سے چوٹ لگنے کے سبب ٹورنامنٹ میں مزید میچ نہیں کھیل سکیں گے۔

انھیں یہ چوٹ ایڈیلیڈ سٹرائکرز کے خلاف میچ کے دوران لگی۔ بہر حال اس میچ میں ان کی ٹیم جیت گئی۔

مشفیق الرحیم ہیلمٹ پر گیند لگنے کے بعد ہسپتال منتقل

آسٹریلین ٹیم کے کھلاڑی پیٹر نیول کو یہ چوٹ 18 ویں اوور میں اس وقت لگی جب سٹرائکرز کی ٹیم مطلوبہ ہدف کا تعاقب کر رہی تھی اور وکٹ کیپر دوسری طرف دیکھ رہے تھے۔

بیٹ بریڈ ہوج کے ہاتھوں سے پھسل گیا اور اڑتا ہوا نیول پر آ پڑا اور بیٹ کے ہینڈل سے ان کے گال کی ہڈی پر چوٹ آئی۔

ہسپتال میں ہونے والی جانچ سے پتہ چلا ہے کہ 31 سالہ نیول کے گال میں خون کی نسیں پھٹ گئی ہیں۔

ایک ہفتے میں یہ دوسری بار ہے جب نیول کو چوٹ کے سبب فیلڈ سے باہر جانا پڑا ہے۔ اس سے قبل سڈنی سکسر کے خلاف ہونے والے مقابلے میں ایک فیلڈر کا تھرو ان کے سر پر لگ گیا تھا۔

خیال رہے کہ گذشتہ روز بنگلہ دیش کی کرکٹ ٹیم کے کپتان مشفق الرحیم کی ہیلمٹ پر ٹم ساؤدی کی گیند لگی تھی اور انھیں ہسپتال لے جایا گيا تھا۔

بہر حال سٹرائکرز کے خلاف ہونے والے میچ میں رینیگیڈز کی ٹیم چھ رنز سے کامیاب رہی۔

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption مشفق الرحیم کو گذشتہ روز چوٹ آئی تھی

ايڈلیڈ اوول میں ہونے والے میچ میں رینیگیڈز نے مقررہ 20 اوورز میں 171 رنز بنائے جس میں مارکس ہیرس نے سب سے زیادہ 85 رنز سکور کیے۔

اگرچہ نیول کو میچ ختم ہونے کے تھوڑی دیر بعد یہ کہتے ہوئے ہسپتال سے رخصت کر دیا گیا کہ ان کے سر میں کوئی چوٹ نہیں ہے۔

بہر حال بعد میں یہ کہا گیا کہ اب وہ رینیگیڈز کے لیے دستیاب نہیں ہیں کرکٹ نیوساؤتھ ویلز کا طبی عملہ آئندہ ہفتوں میں ان کا معائنہ کرے گا۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں