اب کرکٹ صرف شائقین کے لیے، ٹیم میں واپسی کے لیے نہیں: آفریدی

شاہد آفریدی تصویر کے کاپی رائٹ PSL
Image caption 36 سالہ شاہد آفریدی کا بین الاقوامی کرکٹ کریئر 21 سال پر محیط رہا

پاکستانی کرکٹر شاہد آفریدی نے واضح کردیا ہے کہ وہ اپنی انٹرنیشنل کرکٹ ختم کر چکے اور اب جتنی بھی کرکٹ وہ کھیل رہے ہیں وہ اپنے چاہنے والوں کے لیے ہے۔

پاکستان سپر لیگ میں پشاور زلمی اور کراچی کنگز کے درمیان میچ کے بعد صحافیوں سے بات کرتے ہوئے شاہد آفریدی نے کہا کہ وہ اپنے شائقین کے لیے کرکٹ کھیل رہے ہیں اور یہ کرکٹ پاکستانی ٹیم میں واپسی کے لیے نہیں ہے۔

آفریدی کی نصف سنچری رائیگاں، کراچی کنگز کی جیت

جب ان سے پوچھا گیا کہ آپ کے الوداعی میچ کا بھی بہت ذکر رہا تو کیا اب بھی آپ اس بارے میں سوچ رہے ہیں؟

شاہد آفریدی کا جواب تھا:’نہیں جی، خدا حافظ ہو چکا ہے۔ میں اپنی کرکٹ اپنے چاہنے والوں کے لیے کھیل رہا ہوں۔ جتنی بھی باقی ہے سال دو سال مزید کھیلوں گا۔اس وقت میرے لیے سب سے اہم میری فاؤنڈیشن ہے اسے چلانا ہے۔ جتنی سنجیدگی اور پروفیشنل طریقے سے اپنے ملک کے لیے کھیلنا تھا وہ میں کھیلا ہوں۔‘

نامہ نگار عبدالرشید شکور کے مطابق شاہد آفریدی سے جب پوچھا گیا کہ اپنی کرکٹ سے کتنا لطف اٹھا رہے ہیں؟ جس کا جواب انہوں نے اپنی مخصوص مسکراہٹ کے ساتھ دیتے ہوئے کہا ’نظر آرہا ہے۔‘

یاد رہے کہ شاہد آفریدی نے یہ کہا تھا کہ وہ انڈیا میں منعقدہ ورلڈ ٹی ٹوئنٹی کے اختتام پر بین الاقوامی کرکٹ کو خیرباد کہہ دیں گے لیکن عالمی مقابلے میں پاکستانی ٹیم کی شکست کے بعد وہ اپنے فیصلے پر عملدرآمد کے سلسلے میں تذبذب کا شکار دکھائی دیے۔

چیف سلیکٹر انضمام الحق کی خواہش تھی کہ شاہد آفریدی کو ایک میچ میں موقع دے کر بین الاقوامی کرکٹ سے رخصت کیا جائے لیکن پاکستان کرکٹ بورڈ نے اس تجویز کو رد کر دیا۔

36 سالہ شاہد آفریدی کا بین الاقوامی کریئر 21 سال پر محیط رہا ۔اس طویل عرصے میں انہوں نے 48 ٹیسٹ، 398 ون ڈے انٹرنیشنل اور 98 ٹی ٹوئنٹی انٹرنیشنل میچوں میں پاکستان کی نمائندگی کی۔

وہ ٹی ٹوئنٹی انٹرنیشنل میں سب سے زیادہ 97 وکٹیں حاصل کرنے والے بولر ہیں۔

انہیں ون ڈے انٹرنیشنل میں سب سے زیادہ 351 چھکے لگانے کا منفرد اعزاز بھی حاصل ہے۔

شاہد آفریدی نے اکتوبر 1996 ء میں سری لنکا کے خلاف صرف37 گیندوں پر سنچری مکمل کی تھی جو 18 سال تک ون ڈے انٹرنیشنل کی تیز ترین سنچری کا عالمی ریکارڈ رہا۔

یہ ریکارڈ پہلے نیوزی لینڈ کے کوری اینڈرسن نے 36گیندوں پر سنچری بنا کر توڑا لیکن ایک سال بعد ہی جنوبی افریقہ کے اے بی ڈی ویلیئرز نے 31گیندوں پر سنچری بنا کر یہ ریکارڈ اپنے نام کرلیا۔

اسی بارے میں