کوالیفائنگ راؤنڈ میں مایوس کن کارکردگی کے بعد فرحت خان ہاکی ٹیم کے نئے ہیڈ کوچ مقرر

  • عبدالرشید شکور
  • بی بی سی اردو ڈاٹ کام، کراچی

پاکستان ہاکی فیڈریشن نے سابق اولمپیئن حنیف خان کو منیجر اور ہیڈ کوچ کے عہدے سے ہٹاتے ہوئے ایک اور سابق اولمپیئن فرحت خان کو ہاکی ٹیم کا نیا منیجر اور ہیڈ کوچ مقرر کردیا ہے۔

حنیف خان دسمبر سنہ 2015 میں پاکستانی ہاکی ٹیم کے ہیڈ کوچ اور منیجر مقرر کیے گئے تھے۔

پاکستان کی ہاکی ٹیم کے موجودہ کوچ خواجہ جنید کو بھی اپنے عہدے سے ہٹا دیا گیا ہے۔

پاکستان ہاکی فیڈریشن نے ملک شفقت اور محمد سرور کو فرحت خان کی معاونت کے لیے کوچ مقرر کیا ہے۔

سابق اولمپیئن رشید جونیئر کی سربراہی میں قائم قومی سلیکشن کمیٹی بھی تبدیل کردی گئی ہے اور حسن سردار کو نئی سلیکشن کمیٹی کا چیئرمین بنا دیا گیا ہے جبکہ کمیٹی کے دیگر اراکین میں ایاز محمود اور مصدق حسین شامل ہیں۔

کوچنگ سٹاف اور سلیکشن کمیٹی میں یہ تبدیلی پاکستانی ہاکی ٹیم کی ورلڈ کپ کوالیفائنگ راؤنڈ میں مایوس کن کارکردگی کے بعدعمل میں آئی ہے۔

یاد رہے کہ لندن میں ہونے والے ورلڈ کپ کوالیفائنگ راؤنڈ میں پاکستان کی ہاکی ٹیم نے دس ٹیموں میں سے ساتویں پوزیشن حاصل کی تھی۔

وہ اس ٹورنامنٹ میں صرف چین اور سکاٹ لینڈ کو ہرانے میں کامیاب ہو سکی تھی جبکہ اسے انڈیا نے (دو مرتبہ)، ہالینڈ، ارجنٹائن اور کینیڈا نے شکست دی تھی۔

پاکستانی ٹیم ان سات میچوں میں صرف نو گول کرنے میں کامیاب ہوئی جبکہ اس کے خلاف 28 گول ہوئے تھے۔

پاکستانی ٹیم کی اس مایوس ترین کارکردگی کے باوجود ٹیم کے کوچ خواجہ جنید نے وطن واپسی پر یہ بیان دیا تھا کہ ان کا اصل ہدف ورلڈ کپ کے لیے کوالیفائی کرنا تھا جو پورا کرلیا گیا۔

ہاکی ورلڈ کپ آئندہ سال انڈیا میں کھیلا جائے گا۔