آئی پی ایل کا آغاز: پابندی کے بعد چینئی کی جیت کے ساتھ واپسی

براوو تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption براوو نے 68 رنز کی اپنی اننگز میں تین چوکے اور سات چھکے لگائے

انڈین پریمیئر لیگ (آئی پی ایل) کے 11 ویں سیزن کا سنیچر کے روز ممبئی میں ایک رنگا رنگ پروگرام کے ساتھ آغاز ہوا جس کے بعد ابتدائی میچ میں دو سال کی پابندی کے بعد شرکت کرنے والی ٹیم چینئی سپر کنگز نے جیت حاصل کی۔

ویسٹ انڈيز کے آل راؤنڈر ڈوائن براوو نے ممبئی انڈینز کے خلاف ہارے ہوئے میچ کو اپنی آتشی بلے بازی سے جیت میں تبدیل کر دیا۔

براوو نے 30 گیندوں میں 68 رنز کی اپنی تیز ترین اننگز کھیلی اور اپنی ٹیم کو فتح کے قریب تر کر دیا۔

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption بمراہ نے اپنے آخری اوور میں 20 رنز دیے لیکن تاہم انھوں نے تین وکٹیں بھی لیں

واضح رہے کہ چینی سپر کنگز کے اہم رکن گروناتھ میپن کے سپاٹ فکسنگ اور سٹے بازی میں ملوث ہونے کی وجہ سے حکومت کی جانب سے قائم کردہ لودھا کمیٹی نے دو سال کے لیے اس ٹیم کو آئی پی ایل سے خارج کر دیا تھا۔ اس کے ساتھ راجستھان رائلز کی ٹیم پر بھی پابندی لگی تھی۔

یہ دونوں ٹیمیں دو سال کی پابندی کے بعد اب پھر سے آئی پی ایل کا حصہ ہیں۔

آئی پی ایل میں واپسی کے بعد اپنے پہلے میچ میں چینئی کی اننگز کا آغاز اچھا نہ تھا۔

ممبئی انڈینز کے 166 رنز کے ہدف کے تعاقب میں چینئی کے 51 رنز تک ان کے کپتان مہندر سنگھ دھونی اور سریش رائنا سمیت چار اہم وکٹ گر چکے تھے۔

اس کے بعد بھی وقفے وقفے سے چینئی کی وکٹیں گرتی رہیں اور 17 ویں اوور تک اس نے میچ پر اپنی گرفت تقریبا کھو دی تھی اور ممبئی کو واضح طور پر جیت نظر آنے لگی تھی۔

لیکن براوو ممبئی کی کامیابی کی راہ میں حائل تھے اور انھوں نے 18 ویں اوور میں میکلینگھن سے 20 رنز حاصل کیے جبکہ جسپریت بمراہ کے ذریعے پھینکے گئے 19ویں اوور میں آوٹ ہونے کے باوجود 20 رنز حاصل کیے۔

جب سات گیندوں میں چینئی کو جیت کے لیے سات رنز کی ضرورت تھی تو براوو آؤٹ ہو گئے۔ براوو نے اپنی اننگز میں تین چوکے اور سات چھکے لگائے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption مہیندر سنگھ دھونی کو دو سال بعد کپتانی کرتے دیکھا گيا ہے

ان کے آوٹ ہونے کے بعد ریٹائرڈ ہرٹ ہو کر پولین میں بیٹھے کیدار جادھو واپس کھیلنے آئے اور آخری اوور کی چوتھی گیند پر چھکا اور پھر پانچویں گیند پر چوکا لگا کر انھوں نے چینئی کی جھولی میں جیت ڈال دی۔

انھوں نے 22 گیندوں میں 24 رنز بنائے۔ ممبئی کی جانب سے ہاردک پانڈیا اور ایم مارکنڈے نے تین تین وکٹیں لیں۔

اس سے قبل آئی پی ایل 2018 کے پہلے میچ میں دھونی نے ٹاس جیت کر ممبئی انڈینز کو بیٹنگ کی دعوت دی۔

ممبئی کا آغاز اچھا نہیں رہا لیکن پھر مڈل آرڈر کے تین بلے بازوں نے ممبئي کے وانکھیڑے سٹیڈیم میں مقابلے کے لیے ایک اچھا ہدف دیا۔

وکٹ کیپر ایشان کشن نے 40 رنز بانئے جبکہ سوریہ کمار یادو نے 43 رنز اور کرنل پانڈیا نے 41 رنز بنائے۔

اس طرح، ممبئی انڈینز نے 20 اوورز میں 4 وکٹوں کے نقصان پر 165 رنز بنائے۔ شین واٹسن نے دو وکٹیں حاصل کی جبکہ عمران طاہر اور دیپ چاہر نے ایک ایک وکٹ حاصل کی۔

یاد رہے کہ انڈین پریمیئر لیگ یا آئی پی ایل کا آغاز سنہ 2008 میں ہوا تھا اور اس کے بعد سے یہ دنیا کے چند اہم کرکٹ ٹورنامنٹ میں شمار ہونے لگا۔

پہلے سیزن میں پاکستانی کھلاڑیوں کی دھوم تھی لیکن اس کے بعد انڈیا اور پاکستان کے درمیان کشیدگی میں اضافے کے نتیجے میں پاکستانی کھلاڑیوں کو اس میں شامل نہیں کیا گیا۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں