شاداب خان کی دس وکٹیں، پاکستان کی نارتھیمپٹن شائر کے خلاف نو وکٹوں سے فتح

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption شاداب خان نے میچ میں دس وکٹیں حاصل کیں

پاکستان اور نارتھیمپٹن شائر کے خلاف کھیلے جانے والے وارم اپ میچ کے چوتھے اور آخری روز پاکستان نے باآسانی 133 رنز کا ہدف ایک وکٹ پر حاصل کر کے اپنے دورہ انگلینڈ اور آئرلینڈ میں پہلی فتح حاصل کر لی ہے ۔

پاکستان کی جانب سے اوپنر امام الحق نے دورے میں اپنی دوسری نصف سنچری بنائی اور 59 رنز پر ناٹ آؤٹ رہے۔ ان کے ساتھ حارث سہیل نے میچ میں اپنی دوسری نصف سنچری بنائی اور 55 رنز بنا کر ناقابل شکست رہے۔

پاکستان کی جاب سے میچ میں سب سے قابل ذکر کارکردگی شاداب خان کی رہی جنھوں نے فرسٹ کلاس کرکٹ میں پہلی بار میچ میں دس وکٹیں حاصل کی۔

میچ کا تفصیلی سکور کارڈ

اس سے قبل نارتھیمپٹن شائر کی پوری ٹیم اپنی دوسری اننگز میں 301 رنز پر آؤٹ ہو گئی تھی۔

پاکستان کی جانب سے لیگ سپنر شاداب خان اور فاسٹ بولر محمد عباس نے چار چار وکٹیں حاصل کی۔

نارتھیمپٹن شائر کی جانب سے ان کے اوپنر راب نیوٹن نے سنچری بنائی۔

کرکٹ تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption امام الحق نے دورے میں اپنی دوسری نصف سنچری بنائی

چار مئی کو وارم میچ کے آغاز میں نارتھیمپٹن شائر نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کیا تھا۔

پہلی اننگز میں نارتھیمپٹن شائر 259 رنز بنا کر آؤٹ ہوئی۔ روزنگٹن نمایاں بلے باز رہے۔ انھوں نے 90 رنز سکور کیے۔

یہ بھی پڑھیے

’ریورس سوئنگ،فاسٹ بولنگ کے علاوہ کچھ چاہیے تو بتائیں‘

آئرلینڈ کے خلاف میچ ہو اور 2007 کا ورلڈ کپ ذہن میں نہ آئے

پاکستان کی جانب سے سب سے کامیاب بولر شاداب خان رہے تھے۔ انھوں نے 77 رنز دے کر چھ وکٹیں حاصل کیں۔

پاکستان نے اپنی پہلی اننگز میں 428 رنز سکور کیے۔ پاکستانی اننگز کی نمایاں بات اسد شفیق کے 186 رنز ناٹ آؤٹ تھے۔

اسد نے 16 چوکوں اور چھ چھکوں کی مدد سے 186 رنز بنائے اور آؤٹ نہیں ہوئے۔

اسد شفیق کے علاوہ حارث سہیل نے 79 رنز سکور کیے جبکہ بابر اعظم نے 57 رنز بنائے۔

اسد، حارث اور بابر کے علاوہ کوئی کھلاڑی بھی اچھا نہ کھیل سکا۔

پاکستان کے اوپنرز اظہر علی اور امام الحق ٹیم کو اچھا آغاز نہ دے سکے۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں