کرکٹ ورلڈ کپ 2019: نیوزی لینڈ نے بنگلہ دیش کو سنسنی خیز مقابلے کے بعد دو وکٹوں سے شکست دے دی

نیوزی لینڈ تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images

انگلینڈ اور ویلز میں کھیلے جانے ولے کرکٹ کے 12ویں ورلڈ کپ کے نویں میچ میں نیوزی لینڈ نے بنگلہ دیش کو دو وکٹوں سے شکست دے کر ٹورنامنٹ میں لگا تار دوسری فتح اپنے نام کر لی۔

میچ میں کیا ہوا

اوول کے میدان پر کھیلے جانے والے اس میچ میں نیوزی لینڈ نے ٹاس جیت کر بنگلہ دیش کو پہلے بیٹنگ کی دعوت دی تو بنگلہ دیش 49.2 اوورز میں محض 244 رنز ہی بنا سکی۔

بنگلہ دیش کی طرف سے شکیب الحسن نے سب سے زیادہ 64 رنز بنائے جبکہ نیوزی لینڈی کی طرف سے میٹ ہینری نے چار کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا۔

کرکٹ ورلڈ کپ پر بی بی سی اردو کا خصوصی ضمیمہ

جواب میں نیوزی کی ٹیم نے 245 رنز کا ہدف 47 اعشاریہ ایک اوورز میں آٹھ وکٹوں کے نقصان پر پورا کر لیا۔ نیوزی لینڈ کی طرف سے راس ٹیلر نے سب سے زیادہ 82 رنز بنائے جبکہ بنگلہ دیش کی طرف سے شکیب، مہدی حسن، سیف الدین اور مصدق نے دو، دو کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images
Image caption میٹ ہینری نے سومیا سرکار کو بولڈ کر کے یہ اوپننگ شراکت توڑی جس کے بعد بنگلہ دیش کی بیٹنگ سنبھل نہ سکی

میچ کا بہترین بولر

بنگلہ دیش کے اوپنرز اپنی ٹیم کو 45 رنز کا ایک اچھا آغاز دینے میں کامیاب ہو گئے تھے، ایسے میں نیوزی لینڈ کے فاسٹ بولر میٹ ہینری نے سومیا سرکار کو بولڈ کر کے یہ شراکت توڑی جس کے بعد بنگلہ دیش کی بیٹنگ سنبھل نہ سکی۔

اس وکٹ کے علاوہ انھوں نے بنگلہ دیش کی اننگز کے آخر میں تین اہم وکٹیں حاصل کر کے انھیں ایک بڑا مجموعہ بنانے سے روک دیا۔ یاد رہے کہ میٹ ہینری ٹم ساؤدی کی جگہ اس ٹیم میں شامل ہوئے ہیں جو زخمی ہونے کی وجہ سے اس ورلڈکپ کے ابتدائی دو میچ نہیں کھیل سکے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images

میچ کا بہترین بلے باز

ایک ایسے موقع پر جب نیوزی لینڈ کی بیٹنگ لڑکھڑا رہی تھی، راس ٹیلر نے اپنے تجربے کی مدد سے اسے سہارا دیا اور کین ولیمسن کے ساتھ مل کر 105 رنز کی اہم شراکت قائم کی۔

راس ٹیلر نے نو چوکوں کی مدد سے 82 رنز بنائے اور اپنی ٹیم کو فتح سے ہمکنار کیا۔

وہ اس اننگز کی بدولت مین آف دی میچ قرار پائے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images

شکیب کی آل راؤنڈ کاکردگی

آئی سی سی کی آل راؤنڈرز کی درجہ بندی میں شکیب سر فہرست ہیں۔ یہ بات آج ان کی کارکردگی سے صاف ظاہر تھی۔ انھوں نے تیسرے نمبر پر ذمہ دارانہ بیٹنگ کرتے ہوئے 64 رنز بنائے، جس کی بدولت بنگلہ دیش کی ٹیم چھوٹے سکور پر آؤٹ ہونے سے بچ گئی۔

اس کے بعد جب بنگلہ دیش نے اس ہدف کا دفاع شروع کیا تو شکیب نے عمدہ بولنگ کا مظاہرہ کرتے ہوئے دونوں اوپنرز کو پویلین کی راہ دکھائی جس کہ باعث بنگلہ دیش کی میچ میں واپسی ممکن ہوئی۔

تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images

مشفق کی کوتاہیاں

بنگلہ دیش کی بیٹنگ کے دوران مشفق اور شکیب کی 50 رنز کی انتہائی اہم شراکت بنی تو ایسا لگتا تھا کہ بنگلہ دیش ایک بڑا ٹوٹل بنانے میں کامیاب ہو جائے گا، لیکن پھر مشفق اپنی ہی کوتاہی کی وجہ سے 19 رنز پر رن آؤٹ ہو گئے۔

دوسری طرف جب بنگلہ دیش نے 245 رنز کے ہدف کا دفاع شروع کیا تو بنگلہ دیشی ٹیم نیوزی لینڈ کے دو کھلاڑی 60 رنز کے عوض آؤٹ کرنے میں کامیاب ہوگئی تھی۔ ایسے میں مشفق نے نیوزی لینڈ کے کپتان کین ولیم سن کو رن آؤٹ کرنے کا موقع ضائع کر دیا۔

انھوں نے گیند ہاتھوں میں تھامنے سے پہلے ہی بیلز گرا دیں، اس کے بعد کپتان ولیم سن اور راس ٹیلر نے مل کر 105 رنز کی شراکت جوڑی جو بنگلہ دیش کے لیے مہنگی پڑ گئی۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں