ورلڈ کپ پر موسم بھاری پڑ گیا، ایک اور میچ منسوخ

تصویر کے کاپی رائٹ Alex Davidson

کرکٹ ورلڈ کپ 2019 کا منگل کو انگلینڈ کے شہربرسٹل میں بنگلہ دیش اور سری لنکا کے درمیان کھیلا جانے والا میچ بارش کی وجہ سے منسوخ کر دیا گیا ہے۔

اس ٹورنامنٹ کا اب تک یہ تیسرا میچ ہے جو بارش کی وجہ سے منسوخ کرنا پڑا ہے۔ اس سے قبل سری لنکا اور پاکستان کے درمیان میچ جو برسٹل ہی میں ہونا تھا خراب موسم کے باعث شروع ہی نہیں ہو سکا تھا اور یہ میچ بغیر کوئی گیند ہوئے منسوخ کردیا گیا تھا۔

یہ بھی پڑھیے

زینب عباس کو سیاسی شوز کی میزبانی کیوں پسند نہیں؟

ورلڈ کپ 2019 میں آخر بیلز کیوں نہیں گر رہیں؟

یوراج سنگھ کا بین الاقوامی کرکٹ سے ریٹائرمنٹ کا اعلان

آئی سی سی کی انتظامیہ نے میچ شروع ہونے کے مقررہ وقت کے بعد تین گھنٹے تک بارش رکنے کا انتظار کیا جس کے بعد میچ کو منسوخ کرنے کا اعلان کرتے ہوئے دونوں ٹیموں کو قواعد کے مطابق ایک ایک پوائنٹ دے دیا گیا۔

سری لنکا کے اس ورلڈ کپ میں اب تک تین میچ گزر چکے ہیں جن میں سری لنکا کی ٹیم نے ایک جیتا، ایک ہارا اور پاکستان کے ساتھ اس کا میچ بارش کی وجہ سے منسوخ ہو گیا تھا۔

بنگلہ دیش نے بھی تین میچ کھیلے ہیں جن میں سے اسے دو میں شکست ہوئی اور اس نے ایک میچ جیتا ہے۔

برسٹل سے سری لنکا کی ٹیم لندن روانہ ہو رہی ہے جہاں ہفتے کو اس نے آسٹریلیا کے خلاف اپنا اگلا میچ کھیلنا ہے۔

دوسری طرف بنگلہ دیش کی ٹیم چھ دن کے وقفے کے بعد اپنا اگلا میچ ٹونٹن میں ویسٹ انڈیز کے خلاف کھیلے گی۔

اس ہفتے یہ دوسرا میچ ہے جو بارش کی نذر ہوا ہے اس سے قبل پیر کو جنوبی افریقہ اور ویسٹ انڈیز کے درمیان ایک اہم میچ صرف سات اوور کے بعد روکنا پڑا اور بعد میں مسلسل بارش کی وجہ سے منسوخ کرنا پڑا۔

ماضی میں ہونے والے گیارہ ورلڈ کپ مقابلوں میں کبھی دو سے زیادہ میچ بارش سے متاثر نہیں ہوئے ہیں۔ پاکستانی شائقیں کو ہمیشہ یاد رہنے والے 1992 کے آسٹریلیا میں ہونے والے کرکٹ ورلڈ کپ میں دو میچ بارش کی وجہ نہیں ہو سکے تھے اور اس کے بعد 2003 میں بھی دو میچ بارش نے برباد کر دیے تھے۔

موسم کے تیور اس سارے ہفتے درست نظر نہیں آ رہے اور پاکستان نے پہلے بدھ کو اور پھر اتوار کو اپنے دو اہم میچ بالترتیب آسٹریلیا اور انڈیا کے خلاف کھیلنے ہیں۔ دونوں میچوں کے بارش سے متاثر ہونے کے امکانات ہیں۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں