کرکٹ ورلڈ کپ 2019: مورگن کی 17 چھکوں سے مزین سنچری، انگلینڈ نے افغانستان کو 150 رنز سے ہرا دیا

کرکٹ تصویر کے کاپی رائٹ PA

انگلینڈ اور ویلز میں کھیلے جانے والے کرکٹ ورلڈ کپ میں 18 جون کو مانچسٹر میں ہونے والے میچ میں ٹورنامنٹ کی فیورٹ ٹیم انگلینڈ نے افغانستان کو 150 رنز سے ہرا دیا ہے۔

اس کامیابی کی خاص بات انگلینڈ کے کپتان اوئن مورگن کی شاندار بیٹنگ تھی جنھوں نے ورلڈ ریکارڈ 17 چھکوں کی مدد سے اپنے کرئیر کا سب سے زیادہ سکور 148 بنایا۔

انگلینڈ کے 397 رنز کے مجموعے کے جواب میں افغانستان کی ٹیم اپنے مقررہ اوورز میں آٹھ وکٹوں کے نقصان پر 247 رنز بنا سکی۔ افغانستان کے سب سے کامیاب بلے باز ہشمت اللہ شاہدی رہے ہیں جو 76 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔

* میچ کا تفصیلی سکور کارڈ

تصویر کے کاپی رائٹ AFP

افغانستان کی جانب سے نور علی زدران اور گلبدین نائب نے اننگز کا آغاز کیا۔ تاہم دوسرے اوور میں ہی نور علی زدران بغیر کوئی رن بنائے جوفرا آرچر کی گیند پر بولڈ ہوگئے۔

اس کے بعد رحمت شاہ اور گلبدین نائب نے 48 کی شراکت قائم کی۔ گلبدین نائب 12ویں اوور میں 37 رنز بنا کر آؤٹ ہوگئے۔

رحمت شاہ اپنی نصف سنچری سے صرف چار رنز قبل 46 کے سکور پر عادل رشید کی گیند پر کیچ آؤٹ ہوئے۔

اصغر افغان بھی اپنی نصف سنچری مکمل نہ کر سکے اور 44 رنز بنا کر آؤٹ ہوگئے۔ اس کے بعد محمد نبی آئے اور انھوں نے اپنی پہلی ہی گیند پر زبردست چھکا تو مار لیا مگر 9 سکور بنا کر وہ بھی آؤٹ ہوگئے۔

انگلینڈ کی جانب سے عادل رشید اور آرچر نے تین تین جبکہ مارک وڈ نے دو وکٹیں حاصل کیں۔

اس سے قبل انگلینڈ نے مقررہ 50 اوورز میں چھ وکٹوں کے نقصان پر 397 رنز بنائے جن میں سے آخری دس اوور میں 142 رنز بنے۔

انگلش اننگز کی خاص بات کپتان اوئن مورگن کی جارحانہ بلے بازی اور شاندار سنچری تھی۔ انھوں نے 148 رنز کی اننگز کھیلی جس میں 17 چھکے شامل تھے جو کہ ایک عالمی ریکارڈ ہے۔

انھوں نے اپنی سنچری 57 گیندوں پر مکمل کی جو کہ ورلڈ کپ مقابلوں کی چوتھی تیز ترین سنچری ہے۔

ان سے قبل کسی ون ڈے اننگز میں سب سے زیادہ چھکے لگانے کا ریکارڈ روہت شرما اور ابراہم ڈی ویلیئرز کے پاس تھا جنھوں نے 16، 16 چھکے لگائے تھے۔

انگلینڈ نے ٹاس جیت کر بیٹنگ کا فیصلہ کیا تو جیمز ونس اور جونی بیئرسٹو نے محتاط انداز میں میں اننگز کا آغاز کیا تاہم جیمز ونس دسویں اوور میں 44 کے مجموعی سکور پر 26 رنز بنا کر آؤٹ ہوگئے۔

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters

انھیں دولت زدران کی گیند پر مجیب الرحمان نے کیچ کیا۔ اس کے بعد بیئرسٹو اور جو روٹ نے 120 رنز کی شاندار شراکت قائم کی جس کے بعد بیئرسٹو 90 رنز بنا کر آؤٹ ہو گئے۔

ان کی جگہ آنے والے اوئن مورگن نے کریز پر آ کر افغانستان کے بولرز کو مشکل میں ڈال دیا۔ انھوں نے جو روٹ کے ساتھ 189 رنز کی شراکت قائم کی۔

اننگز کے آخری مرحلے میں جو روٹ ٹورنامنٹ میں اپنی تیسری سنچری مکمل نہ کر سکے اور 88 پر آؤٹ ہو گئے۔ جس کے تھوڑی دیر بعد ایون مورگن 148 کے سکور پر آؤٹ ہوئے۔

جوس بٹلر اور بین سٹوکس کوئی خاطر خواہ کارکردگی نہ دکھا سکے اور دونوں دو، دو رنز بنا کر آؤٹ ہوگئے تاہم معین علی نے آخری مراحل میں نو گیندوں پر 31 رنز بنا کر ٹیم کا سکور 397 رنز تک پہنچا دیا۔

یہ بھی پڑھیے

اولڈ ٹریفرڈ سے ہم نے کیا سیکھا

پاکستانی اشتہار میں ابھینندن کے مذاق پر انڈین شائقین ناراض

ورلڈ کپ 2019 میں آخر بیلز کیوں نہیں گر رہیں؟

اس ورلڈ کپ میں انگلینڈ نے اب تک چار میچ کھیلے ہیں جن میں سے تین میں وہ کامیاب رہے ہیں اور ان کے چھ پوائنٹس ہیں۔ انھوں نے جنوبی افریقہ، بنگلہ دیش، اور ویسٹ انڈیز کو ہرایا ہے جبکہ پاکستان کے ہاتھوں انھیں شکست کھانا پڑی۔

اسی بارے میں