جنوبی افریقہ کے کرکٹ بورڈ نے اگلے ماہ پاکستان آ کر کھیلنے سے معذرت کر لی

کوئنٹن ڈی کاک تصویر کے کاپی رائٹ Getty Images

جنوبی افریقہ کے کرکٹ بورڈ نے آئندہ ماہ پاکستان کا دورہ کرنے سے معذرت کر لی ہے۔ اس کی وجہ ’زیادہ کرکٹ کھیلنے کے باعث کھلاڑیوں پر دباؤ بڑھنا‘ بتایا گیا ہے۔

اس دورے میں اسے پاکستان کے خلاف تین ٹی ٹوئنٹی انٹرنیشنل میچوں کی سیریز کھیلنی تھی۔

جنوبی افریقی کرکٹ بورڈ نے دورہ نہ کرنے کے بارے میں پاکستان کرکٹ بورڈ کو باضابطہ طور پر مطلع کردیا ہے۔

مزید ہڑھیے

ایم سی سی کرکٹ ٹیم کا دورہ پاکستان کے لیے کیوں اہم

'مگر نقصان تو ٹیسٹ کرکٹ کا ہوا'

سپاٹ فکسنگ کیس میں ناصر جمشید کو 17 ماہ قید کی سزا

جنوبی افریقی کرکٹ بورڈ کا کہنا ہے کہ اس کے کھلاڑی بہت زیادہ کرکٹ کھیل رہے ہیں اور اس دباؤ کی وجہ سے ان کے لیے پاکستان آکر کھیلنا ممکن نہیں ہے۔

پاکستان کرکٹ بورڈ کے ترجمان کے مطابق جنوبی افریقی کرکٹ بورڈ نے یہ ضرور کہا ہے کہ وہ اسی سال کسی وقت پاکستان میں یہ سیریز ضرور کھیلے گا۔

یاد رہے کہ پاکستان کرکٹ بورڈ نے جنوبی افریقہ کو پاکستان میں تین ٹی ٹوئنٹی میچوں کی سیریز کی تجویز پیش کی تھی اس نے ان میچوں کے لیے راولپنڈی کا نام تجویز کیا تھا۔

پاکستان کرکٹ بورڈ کے مطابق جنوبی افریقی کرکٹ بورڈ نے اس تجویز سے اتفاق کیا تھا تاہم یہ بھی کہا تھا کہ جنوبی افریقی کرکٹ بورڈ کا سکیورٹی وفد روری اسٹین کی سربراہی میں پاکستان آکر سکیورٹی کے انتظامات کا جائزہ لے گا۔

تصویر کے کاپی رائٹ PCB
Image caption خیال رہے کہ اس وقت میریلبون کرکٹ کلب (ایم سی سی) کی کرکٹ ٹیم پاکستان کا دورہ کر رہی ہے جو بین الاقوامی کرکٹ کی پاکستان میں واپسی کا حصہ ہے

جنوبی افریقی کرکٹ ٹیم اس وقت انگلینڈ کے خلاف ہوم سیریز میں مصروف ہے جس کے بعد اسے آسٹریلیا کے خلاف تین ٹوئنٹی اور تین ون ڈے میچوں کی سیریز کی میزبانی کرنی ہے اور پھر بھارت کا دورہ کرنا ہے جس کا آخری میچ اٹھارہ مارچ کو ہے۔

پاکستان کرکٹ بورڈ کا خیال تھا کہ چونکہ پی ایس ایل کا فائنل 22 مارچ کو ہے لہٰذا جنوبی افریقی ٹیم کو چار دنوں کے لیے دبئی میں رکھا جائے کیونکہ ان کے لیے بھارت سے وطن واپس جا کر فوراً پاکستان آنا مشکل ہو گا۔

جنوبی افریقی کرکٹرز 18 مارچ کو بھارت کے خلاف سیریز کے بعد اب آئی پی ایل میں حصہ لیں گے جو 28 مارچ کو شروع ہو گی۔

خیال رہے کہ اس وقت میریلبون کرکٹ کلب (ایم سی سی) کی کرکٹ ٹیم پاکستان کا دورہ کر رہی ہے جو بین الاقوامی کرکٹ کی پاکستان میں واپسی کا حصہ ہے۔

اس ٹیم کی قیادت سری لنکا کے سابق کپتان کمار سنگاکارا کر رہے ہیں جو اس وقت ایم سی سی کے صدر بھی ہیں۔

متعلقہ عنوانات

اسی بارے میں