جب بارسلونا چھوڑنے کے نام پر میسی رو دیے: ’میں اس کلب کو چھوڑنا نہیں چاہتا۔ مجھے اس کلب سے محبت ہے‘

میسی کا کہنا ہے کہ انھیں بارسلونا کلب چھوڑنے کا بے حد افسوس ہے

،تصویر کا ذریعہGetty Images

،تصویر کا کیپشن

میسی کا کہنا ہے کہ انھیں بارسلونا کلب چھوڑنے کا بے حد افسوس ہے

جزبات سے لبریز اور آنکھوں میں آنسو لیے بارسلونا کے سٹار فٹ بالر لیونل میسی اس بات کا جواب نہ دے سکے کہ وہ بارسلونا کلب کیوں چھوڑ رہے ہیں؟ میسی کا کہنا تھا کہ پیرس سینٹ جرمین میں ان کی شمولیت کے امکانات ہیں لیکن ابھی کچھ بھی طے نہیں پایا ہے۔

اس سے قبل فٹبال کلب بارسلونا نے کہا تھا کہ 'مالی اور انتظامی مشکلات کی وجہ' سے میسی اب بارسلونا کے لیے نہیں کھیلیں گے۔

بارسلونا میں اتوار کو ہونے والی ایک پریس کانفرنس میں میسی کا کہنا تھا کہ ’مجھے اور میرے خاندان والوں کو یہ یقین تھا کہ ہم ہمیشہ یہیں رہیں گے۔‘

ان کا مزید کہنا تھا کہ ’اس کلب کے ساتھ میرا رشتہ ختم ہونے جارہا ہے اور اب ایک نیا باب شروع ہوگا۔ یہ میری زندگی کا سب سے مشکل لمحہ ہے۔

’میں اس کلب کو چھوڑنا نہیں چاہتا۔ مجھے اس کلب سے محبت ہے اور میں نے اس لمحے کی کبھی بھی امید نہیں کی تھی۔

’گزشتہ برس میں کلب کو چھوڑنا چاہتا تھا، اس برس میں کلب کے ساتھ رہنا چاہتا ہوں۔ اس لیے مجھے اتنا افسوس ہورہا ہے۔

’جب میں گھر جاؤں گا تب بھی مجھے افسوس ہوتا رہے گا۔ مجھے مزید برا محسوس ہو گا۔ میں ابھی بھی اس سب کے لیے تیار نہیں ہوں۔‘

34 سالہ میسی یکم جولائی سے فری ایجنٹ ہیں جب بارسلونا کے ساتھ ان کا کانٹریکٹ ختم ہو گیا تھا۔

اس کے دو ہفتے کے بعد ان کا کلب کے ساتھ قدرے کم معاوضے پر معاہدہ تو ہو گیا تھا تاہم یہ معاہدہ میسی کی تنخواہ کے وسائل کے سات مشروط تھا۔

اب میسی فرانس کے پی ایس جی کلب کے ساتھ معاہدہ کرنے کے لیے مذاکرات کر رہے ہیں جہاں وہ کلییان ایمباپے اور سابق برسلونا کے ساتھی نیمار کے ساتھ کھلیں گے۔

اس بارے میں ان کا کہنا تھا کہ ’اس کا امکان ہے لیکن ابھی ان کے ساتھ میرا کوئی معاہدہ نہیں ہوا ہے۔ ديگر کلب بھی میرے ساتھ معاہدہ کرنے کے خواہشمند ہیں لیکن ابھی تک کچھ بھی طے نہیں پایا ہے۔ ہاں بات چیت جاری ہے۔‘

ان کا مزید کہنا تھا کہ ’میں سب لوگوں کی محبت کا احسان مند ہوں۔ اس محبت کا جو لوگوں نے میرے لیے، میرے ساتھیوں اور میرے کلب کے لیے دکھائی ہے۔ آج مجھے اس سب کو الوداع کہنا پڑ رہا ہے۔‘

بارسلونا کے سٹیدیم کمیپ نو میں ہونے والی اس پریس کانفرنس کے باہر سینکڑوں شائقین میسی کی ایک جھلک دیکھنے کے لیے موجود تھے۔

،تصویر کا ذریعہReuters

،تصویر کا کیپشن

میسی کے بارسلونا کلب چھوڑنے پر ان کے چاہنے والے مایوس ہیں

’میں یہاں تب آیا تھا جب میں بہت چھوٹا تھا۔ میری عمر 13 برس تھی۔ آج میں 21 برس بعد کلب چھوڑ رہا ہوں۔ میرے ساتھ میری اہلیہ اور تین بچے بھی ہیں۔‘

’میں نے اس شہر میں رہ کر جو کچھ بھی کیا ہے اس پر مجھے فخر ہے۔ مجھے اس بات میں کوئی شک نہیں ہے کہ کچھ سالوں بعد ہم واپس یہاں آئیں گے کیونکہ یہ ہمارا گھر ہے۔‘

،تصویر کا ذریعہGetty Images

،تصویر کا کیپشن

میسی نے بارسلونا کے ساتھ کھیلتے ہوئے 37 ٹرافیاں جیتی ہیں

میسی بارسلونا کے اہم ترین گول سکوررز میں سے ایک ہیں اور انھوں نے اس کلب کے لیے 672 گول کیے ہیں اور 10 مرتبہ لا لیگا ٹائیٹل جیتا ہے، چار چیمپیئنز لیگ جیتی ہیں، سات کوپا دل ریز اور بالو ڈور چھ مرتبہ جیتے ہیں۔

ایک عہد کا اختتام

سنہ 2000 میں 13 سال کی عمر میں میسی نے بارسلونا کی مشہور لا ماسیا اکیڈمی کا رخ کیا تھا اور 2004 میں انھوں نے اپنا سینیئر ڈیبیو کیا تھا۔

انھوں نے اس کلب کے لیے 778 میچ کھیلے، 672 گول کیے جن میں سے 120 چیمپیئنز لیگ کے گول ہیں۔ چیمپیئنز لیگ میں ان کے گولوں کی تعداد دوسرے نمبر پر ہے، سب سے زیادہ گول کرسٹیانو رونالڈو نے کر رکھے ہیں۔ میسی نے اس کے علاوہ 474 لا لیگا گول بھی کیے ہیں۔

،تصویر کا ذریعہGetty Images

،تصویر کا کیپشن

میسی دنیا کے اہم ترین فٹ بالرز میں سے ایک ہیں

مواد پر جائیں
پوڈکاسٹ
ڈرامہ کوئین

’ڈرامہ کوئین‘ پوڈکاسٹ میں سنیے وہ باتیں جنہیں کسی کے ساتھ بانٹنے نہیں دیا جاتا

قسطیں

مواد پر جائیں

میسی نے چھ مرتبہ یورپین گولڈن شو انعام جیتا ہے جو کہ یورپ کا سب سے زیادہ گول کرنے کا انعام ہوتا ہے۔

میسی شاید اب دنیا کے سب سے زیادہ ڈیمانڈ والے کھلاڑی بننے والے ہیں۔ اکثر کہا جاتا ہے کہ وہ یا تو پیرس سینٹ جرمین یا پھر مینچسٹر سٹی جائیں گے مگر اس وقت تک یہ واضح نہیں کہ میسی اپنا اگلا سیزن کہاں کھیلیں گے۔

ان کے پاس ایک اور آپشن امریکن میجر لیگ فٹبال بھی ہے جس پر وہ ماضی میں بھی غور کر چکے ہیں۔

یاد رہے کہ گذشتہ سال میسی نے بارسلونا سے کہا تھا کہ انھیں گرمیوں میں فری ایجنٹ بننے کی اجازت دی جائے تاہم بعد میں انھوں نے فیصلہ کیا کہ وہ گرمیوں میں بھی بارسلونا ہی رہیں گے کیونکہ کسی بھی کلب کے انھیں بارسلونا سے نکالنے کے لیے درکار 700 ملین یورو کا جرمانہ دینے کی سکت نہیں ہے اور بارسلونا کا اصرار تھا کہ وہ اس شرط سے دستبردار نہیں ہو گا۔

بارسلونا چھوڑنے پر ان کے شائقین نے ٹوئٹر پر بھی اپنی مایوسی کا اظہار کیا ہے۔ بہت سے لوگ خوش ہیں کہ ان کے بچپن سے جوانی تک میسی نے بارسلونا کے لیے کھیلتے ہوئے انھیں انگنت یادیں دی ہیں۔ بعض صارفین کا کہنا ہے کہ انھیں میسی کے کلب چھوڑنے کا افسوس ہے لیکن یہ ان کا فیصلہ ہے ہمں اس کی قدر کرنی چاہیے۔

نورعبداللہ کا کہنا ہے کہ اپنے درد و دکھ کے باوجود میسی دنیا کو امید دینا چاہتے ہیں۔

وہیں صابر شاریفی کا کہنا تھا کہ میں سوچ رہا ہوں کہ میسی کے بارسلونا کلب چھوڑنے کے بعد لوگ کلب کے ساتھ اپنی وفاداری جاری رکھیں گے یا نہیں؟

ایک اور صارف کا کہنا ہے کہ میں میسی کو بچپن سے بارسلونا کے لیے کھیلتے ہوئے دیکھ رہا تھا۔ مجھے لگتا تھا کہ وہ اسی کلب سے ریٹائر ہوں گے۔ میں ان کو مستقبل کے لیے نیک خواہشات پیش کرتا ہوں۔