آسٹریلیا کو 23 رن سے شکست

عمر اکمل
Image caption پاکستان کی طرف سے عمر اکمل کی اچھی بیٹنگ

برطانیہ کے شہر برمنگھم کے ایجبیسٹن کے میدان میں پاکستان اور آسٹریلیا کے درمیان ٹوئنٹی ٹوئنٹی ٹورنامنٹ کے پہلے میچ میں پاکستان نے آسٹریلیا کو تئیس رن سے ہرا دیا۔

پاکستان نے پہلے کھیلتے ہوئے آٹھ وکٹوں کے نقصان پر مقررہ بیس اوورز میں 167 رنز بنائے تھے۔

پاکستان اور آسٹریلیا کے میچ کا تازہ ترین سکور کارڈ

پاکستان اور آسٹریلیا کے مابین میچ کی تصاویر

آسٹریلیا کی طرف سے واٹسن بغیر کوئی رن بنائے محمد عامر کی گیند پر ایل بی ڈبلیو آؤٹ ہوئے۔ اس وقت سکور دو تھا۔ جب سکور 29 پر پہنچا تو کلارک عبدالرزاق کی گیند پر شاہد آفریدی کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہوئے۔

جب سکور 81 پر پہنچا تو ہسی 34 رنز بنا کر شاہد آفریدی کی گیند پر شعیب ملک کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہوئے۔ اس کے فوراً بعد ہی 85 کے سکور پر وارمر آؤٹ ہوئے۔ انہوں نے 41 رنز بنائے۔ پانچویں آؤٹ ہونے والے کھلاڑی وائٹ تھے جو 17 رنز بنا کر محمد عامر کی گیند پر آؤٹ ہوئے۔

ایک سو بتیس کے مجموعی سکور پر سمتھ بارہ رن بنا کر عامر کے ہاتھوں بولڈ ہوئے۔ ساتویں وکٹ ایک سو چونتیس کے سکور پر گری جب ایم ہسی اٹھارہ رن بنا کر آؤٹ ہوئے۔

باقی تین کھلاڑی صرف دو رن کا اضافہ کر سکے اور آؤٹ ہو گئے۔ پین ایک رن بناکر، جانسن تین رن اور ٹیٹ چھ رن بناکر آؤٹ ہوئے۔

پاکستان کی جانب سے محمد عامر اور سعید اجمل نے تین تین وکٹیں حاصل کیں اور عمر گل نے دو۔ رزاق اور شاہد آفریدی نے ایک ایک وکٹ حاصل کی جبکہ شعیب اختر نے دو اوور میں چونتیس رن دیے اور کوئی وکٹ حاصل نہ کرسکے۔

پاکستان کی طرف سے سب سے کامیاب بیٹسمین عمر اکمل رہے جنہوں نے سات چوکوں اور تین چھکوں کی مدد سے31 گیندوں پر 64 رنز بنائے۔ انہوں نے اپنی نصف سنچری بیس گیندوں پر مکمل کی۔ یہ پاکستان کی طرف سے ٹوئنٹی ٹوئنٹی ٹورنامنٹ میں کسی بھی پاکستانی کھلاڑی کی سب سے تیز نصف سنچری ہے۔ انہیں ٹیٹ نے بولڈ کیا۔

ایک وقت تھا کہ ایسا لگتا تھا کہ پاکستان کی بیٹنگ بری طرح ناکام ہو جائے گی اور ٹیم بہت کم سکور پر آؤٹ ہو جائے گی۔ لیکن عمر اکمل اور شعیب ملک نے پانچویں وکٹ کی شراکت میں 51 رنز بنا کر پاکستان کو مشکل سے نکالا۔ اس کے بعد عمر اکمل نے عبدالرزاق کے ساتھ 39 رنز کی پارٹنرشپ بنائی۔

پاکستان نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کیا لیکن پاکستان کی اوپننگ جوڑی ناکام رہی ہے اور جب سکور دو پر ہی تھا تو شاہزیب حسن بغیر کوئی رن بنائے ڈرک نانیز کی گیند پر ہسی کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہو گئے۔

دوسری وکٹ 45 کے سکور پر گری جب کامران اکمل دو چوکوں اور ایک چھکے کی مدد سے 23 رنز بنا کر رن آؤٹ ہوئے۔ اسی سکور پر سلمان بٹ تیرہ رن بنا کر ہسی کی گیند پر آؤٹ ہوئے۔

چوتھے آؤٹ ہونے والے کھلاڑی پاکستان کے کپتان شاہد آفریدی تھے جو کوئی رن بنائے بغیر سمتھ کی گیند پر ایل بی ڈبلیو آؤٹ ہوئے۔ ان کے بعد شعیب ملک اور عمر اکمل سکور کو 98 تک لے گئے لیکن یہاں پر شعیب کو نانیز نے وکٹ کیپر پین کے ہاتھوں کیچ آؤٹ کر دیا۔

جب سکور 137 پر پہنچا تو عبدالرزاق ٹیٹ کی گیند پر سات رنز بنا کر آؤٹ ہو گئے۔

پاکستان کی آٹھویں وکٹ 167 کے سکور پر گری جب عمر گل میچ کے بیسویں اوور میں دس رنز بنانے کے بعد رن آؤٹ ہو گئے۔

محمد عامر گیارہ رنز بنا کر ناٹ آؤٹ رہے۔

اسی بارے میں