آخری وقت اشاعت:  پير 12 جولائ 2010 ,‭ 22:28 GMT 03:28 PST

سپین فٹبال کا نیا عالمی چیمپئن

تازہ ترین سکور اور گروپ ٹیبلز کے لیے آپ کے پاس جاواسکرپٹ ہونا چاہیئے

جنوبی افریقہ کے شہر جوہانسبرگ کے سوکر سٹی سٹیڈیم میں انیسویں فٹبال ورلڈ کپ کے فائنل میں سپین نے ہالینڈ کو ہرا کر پہلی مرتبہ عالمی کپ جیتنے کا اعزاز حاصل کر لیا ہے۔ میچ کا واحد گول سپین کے کھلاڑی انیسٹا نے اضافی وقت کے دوسرے ہاف میں کیا۔

اضافی وقت کے دوسرے ہاف میں ہی ہالینڈ کے کھلاڑی ہاٹنگا کو فاؤل کرنے پر ریڈ کارڈ دکھا کر باہر کر دیا گیا اور اس طرح ہالینڈ کی ٹیم کو دس کھلاڑیوں سے کھیلنا پڑا۔

سپین کی ٹیم

عالمی مقابلوں کے بہترین کھلاڑی کا اعزاز یوروگوئے کے فورلان کو اور سب سے زیادہ گول کرنے کا اعزاز جرمنی کے مولر کو حاصل ہوا۔

میچ کے آغاز سے ہی سپین کی ٹیم نے ہالینڈ کے گول پر حملے شروع کر دیے اور دباؤ بڑھانا شروع کر دیا لیکن پہلے ہاف کے اختتام تک دونوں ٹیموں میں سے کوئی بھی گول نہ کر سکی۔ دوسرے ہاف میں دونوں ٹیموں کو گول کرنے کے کئی موقعے ملے لیکن دونوں ٹیمیں ہی ان سے کوئی فائدہ نہ اٹھا سکیں۔ خاص کر ہالینڈ کے کھلاڑی رابن کو بالکل کھلا گول ملا لیکن بال سپین کے گول کیپر کے پاؤں سے لگنے کے بعد باہر چلا گیا۔

پہلے ہاف میں ہالینڈ کے تین جبکہ سپین کے دو کھلاڑیوں کو پیلا کارڈ دکھایا گیا۔ ایک لمحے پر جب ہالینڈ کے ڈی جونگ نے سپین کے کھلاڑی اولونسو کے سینے پر پاؤں مارا تو لگا کہ ان کو ریڈ کارڈ دکھا دیا جائے گا لیکن ریفری نے نرم رویہ رکھتے ہوئے پیلا کارڈ دکھانے پر ہی اکتفا کیا۔

ہالینڈ انیس سو چوہتر اور اٹھتر میں فائنل میچ کھیل چکا ہے لیکن سپین عالمی کپ مقابلوں کے فائنل تک پہلے بھی کبھی رسائی حاصل نہیں کر سکا تھا۔ سپین کا عالمی کپ میں سب بہتر ریکارڈ 1950 کے مقابلوں میں چوتھے نمبر پر آنا تھا۔

ورلڈ کپ کے ٹاپ سکور

ویا اور شنائڈر
  • جرمنی: ملر، پانچ گول
  • سپین: ویا، پانچ گول
  • ہالینڈ: شنائڈر، پانچ گول
  • یوروگوئے: فورلان، پانچ گول
  • ہیگوئن: ارجنٹائن، چار گول

اس میچ سے پہلے تک سپین کی ٹیم نے اپنے آخری چون میچوں میں سے پچاس میں کامیابی حاصل کی تھی۔ جبکہ ہالینڈ پچیس میچ مسلسل جیت چکا تھا۔ اس طرح اسے فائنل سے پہلے تک عالمی کپ میں ناقابل شکست ٹیم رہنے کا اعزاز بھی حاصل ہے۔

میچ سے پہلے سپین کے کپتان آئیکر کاسیلاس نے تسلیم کیا تھا کہ ورلڈ کپ کے فائنل میچوں کے دوران ان کی ٹیم عصابی دباؤ کا شکار رہی ہے۔

انہوں نے کہا کہ ’یہ بہت اہم میچ ہے۔ ہمارے کیریئر کا سب سے اہم میچ۔ اور ہم کسی حد تک گھبراہٹ کا شکار بھی ہے۔‘

[an error occurred while processing this directive]

BBC navigation

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔