’سن‘ اخبار کے خلاف قانونی کارروائی کا فیصلہ

اعجاز بٹ
Image caption آئی سی سی جس نے اخبار کی اطلاعات پر اوول کے ون ڈے کے بارے میں تحقیقات کا اعلان کیا تھا چند روز قبل اسے کلیئر کر چکی ہے۔

پاکستان کرکٹ بورڈ ( پی سی بی) برطانوی اخبار ’دا سن‘ کے خلاف قانونی چارہ جوئی کرنے والا ہے اور پی سی بی کے قانونی مشیر اس کی تیاری کو حتمی شکل دینے میں مصروف ہیں۔

پی سی بی کے قانونی مشیر تفضل حیدر رضوی نے بی بی سی کو بتایا کہ ’سن‘ اخبار نے اوول کے ون ڈے کے بارے میں جو من گھڑت الزامات عائد کیے پاکستان کرکٹ بورڈ اس پر قانونی چارہ جوئی کر رہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ چونکہ یہ معاملہ برطانیہ کا ہے لہذا اسے وہاں کے قوانین کے مطابق دیکھا جا رہا ہے اور جلد ہی مروجہ قوانین کے تحت اخبار کو قانونی نوٹس بھیجا جائے گا۔

یاد رہے کہ اخبار دی سن کی فراہم کردہ اطلاعات کی بنیاد پر آئی سی سی نے پاکستان اور انگلینڈ کے درمیان اوول ون ڈے کے مبینہ طور پر مشکوک ہونے کی تحقیقات شروع کرنے کا اعلان کیا تھا۔ وہ میچ پاکستان نے تئیس رن سے جیتا تھا۔

اخبار نے دعوٰی کیا تھا کہ اوول کے ون ڈے کے بارے میں مبینہ طور پر بُک میکرز کو پہلے سے پتہ تھا کہ اس میں رنز کس طرح بنیں گے لیکن حیرت انگیز طور پر اس میں کسی ٹیم کا نام نہیں لیا گیا تھا۔

انگلینڈ اینڈ ویلز کرکٹ بورڈ نے اپنے کھلاڑیوں کے ایسی کسی منفی سرگرمی میں ملوث ہونے کی تردید کردی تھی جس کے بعد پاکستان کرکٹ بورڈ کے چیئرمین اعجاز بٹ نے آئی سی سی اور انگلینڈ کرکٹ بورڈ کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا تھا کہ بک میکرز کے حلقوں میں یہ باتیں گردش کررہی تھیں کہ اوول کے ون ڈے میں پاکستانی نہیں بلکہ انگلینڈ کے کرکٹر ملوث تھے۔

اس بیان پر انگلش کرکٹرز کی ایسوسی ایشن نے اعجاز بٹ کو قانونی نوٹس بھیجا تھا جس پر انہیں معافی مانگنی پڑی تھی۔

غور طلب بات یہ ہے کہ آئی سی سی جس نے ایک اخبار کی اطلاعات پر اوول کے ون ڈے کے بارے میں تحقیقات کا اعلان کیا تھا چند روز قبل ہی اسے ’ کلیئر‘ کر چکی ہے۔

اسی بارے میں