سری لنکا ویسٹ انڈیز میچ برابر

پارناوتانا آؤٹ
Image caption پارناوتانا پچانوے رن بنا کر آؤٹ ہوئے

گال میں سری لنکا اور ویسٹ انڈیز کے درمیان کھیلا جانے والا پہلا ٹیسٹ میچ ہار جیت کے فیصلے کے بغیر ختم ہو گیا۔

چائے کے وقفے سے کچھ دیر قبل سری لنکا نے چار وکٹوں کے نقصان پر دو سو اکتالیس رن بنائے تھے جب بارش کی وجہ سے کھیل روک دیا گیا۔ اس موقع پر ایمپائروں نے چائے کے وقفے کا اعلان کر دیا۔ اس وقت سری لنکا کو ویسٹ انڈیز پر انتالیس رن کی سبقت حاصل تھی۔

تاہم چائے کے وقفے کے بعد بھی میچ شروع نہیں کرایا جا سکا۔

ٹیسٹ کے چوتھے روز سری لنکا کی ٹیم فالو آن پر مجبور ہوگئی تھی۔ پہلی اننگز میں جس وقت سری لنکا کے آخری کھلاڑی پی جے وردھنے آؤٹ ہوئے اس وقت ٹیم کو فالو آن سے بچنے کے لیے صرف تین مزید رنز کی ضرورت تھی۔

تفصیلی سکور کارڈ

ویسٹ انڈیز نے پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے کرس گیل کے تین سو تینتیس رنز کت بدولت پانچ سو اسی رن بنائے تھے اور سری لنکا کی ٹیم پہلی اننگز میں تین سو اٹھہتر رن بنا کر آؤٹ ہو گئی تھی۔

پہلی اننگز میں سری لنکا کی طرف سے سنگاکارا تہتر رنز بنا کر ٹاپ سکورر رہے۔ مہیلا جے وردھنے نے انسٹھ، سمرا ویرا نے باون، پی جے وردھنے نے اٹھاون اور پرساد نے سینتالیس رنز بنا کر ٹیم کو فالو آن سے بچانے کی بہت کوشش کی لیکن وہ اپنے مقصد میں کامیاب نہ ہو سکے۔

کرس گیل کرکٹ کی تاریخ میں چوتھے ایسے کھلاڑی بن گئے ہیں جنہوں نے ٹیسٹ کرکٹ میں دو مرتبہ ٹرپل سنچری بنائی ہے۔

کرس گیل نے اس سے پہلے جنوبی افریقہ کے خلاف ٹرپل سنچری بنائی تھی جس میں ان کا انفرادی سکور تین سو سترہ رنز تھا۔

اس ٹیسٹ میچ میں ویسٹ انڈیز نے ٹاس جیت کر پہلے کھیلنے کا فیصلہ کیا تھا۔

اسی بارے میں