خواتین ٹیم کی جیت بڑی اہم ہے

پاکستانی کرکٹ ٹیم
Image caption پاکستانی خواتین کرکٹ ٹیم بنگلہ دیش کے ساتھ کھیلتے ہوئے

پاکستان کی خواتین کرکٹ ٹیم نے ایشیائی کھیلوں میں کرکٹ کا پہلا گولڈ میڈل جیت لیا ہے اور گونگ زو میں پاکستان کا بھی یہ پہلا طلائی تمغہ ہے۔

فائنل میں پاکستانی ٹیم کا مقابلہ بنگلہ دیش کی ٹیم سے تھا اور اس نے اسے دس وکٹ سے شکست دے کر شاندار جیت حاصل کی ہے۔

ابتداء ہی سے توقع کی جا رہی تھی کہ پاکستانی ٹیم اچھی کار کردگی کا مظاہرہ کرےگی اور اسے چاندی کا تمغہ مل سکتا ہے۔

لیکن فائنل میں جس طرح پاکستانی ٹیم نے بنگلہ دیش کی ٹیم کو دس وکٹوں سے ہرایا اس سے لگتا ہے کہ مقابلے میں اس کے ٹکّر کی کوئی دوسری ٹیم نہیں تھی۔

Image caption ندا اور جویریہ نے شاندار بیٹنگ کا مظاہرہ کیا

فائنل میں ٹاس جیتنے کے بعد پاکستان کی ٹیم نے بنگلہ دیش کو پہلے بلے بازی کی دعوت دی اور بنگلہ دیش کی ٹیم جم نہیں پائی جس نے بیس اوورز میں آٹھ وکٹوں کے نقصان پر صرف بانوے رنز بنائے۔

بنگلہ دیش کی کپتان سلمہ خاتون نے سب سے زیادہ چوبیس رنز بنائے۔ جبکہ پاکستان کی گیند باز ندا رشید نے چار وکٹیں اور کپتان ثناء میر نے دو وکٹیں حاصل کیں۔

پاکستان کے لیے بانوئے کا سکور کوئی بڑا سکور نہیں تھا اور ندا رشید نے جیسے گیند بازی میں کمال دکھایا تھا ویسے ہی بلے بازی میں شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے سات چوکوں کی مدد سے تینتالیس گیندوں پر اکاون رنز بنائے۔

ابتدائی بلے باز کی حیثیت سے جویریہ ودؤد نے ان کا اچھا ساتھ نبھایا اور انہوں نے بھی انتالیس رنز بنائے اس طرح بغیر کوئی وکٹ کے نقصان کے ہی پاکستان نے فائنل جیت لیا۔

بنگلہ دیش کی کپتان سلمہ خاتون نے اس کھیل میں ساتھ گيند بازوں کو آزمایا تاکہ کوئی کامیابی مل جائے مگر وہ کامیاب نہیں ہوئی اور چار اوور کے باقی رہتے ہی میچ ختم ہو گيا۔

جیت کے بعد پاکستان کی خواتین کی ہاکی کرکٹ ٹیم نے میدان کا ایک پورا چکر لگایا اور شائیقین کی داد حاصل کی۔

پاکستان نے سیمی فائنل مقابلے میں بھی جاپان کی ٹیم کو آسانی سے ہرا دیا تھا اور گروپ میچوں میں اسے کوئی بھی ٹیم نہیں ہرا پائی تھی۔

ایشیائی کھیلوں کے خواتین کے کرکٹ مقابلوں میں جاپان نے چین کو شکست دیکر کانسی کا تمغہ حاصل کیاہے۔

ایک ایسے وقت جب پاکستان کی مردوں کی کرکٹ ٹیم میچ فکسنگ جیسے کئی تنازعات سے دوچار ہے اور شدت پسندی کے سبب اس کے ملک میں کوئی بھی ٹیم کرکٹ کھیلنے کے لیے تیار نہیں ہے خواتین کی جیت پاکستان کرکٹ شائقین کے لیے ایک اچھی خبر ہے۔

پریس کانفرنس کے دوران جب ٹیم کی کپتان ثناء میر سے اس بارے میں پوچھا گیا تو ان کا کہنا تھا کہ ابھی سچ اور جھوٹ کا کچھ پتہ نہیں ہے اور خواتین کی ٹیم کی یہ فتح اپنے آپ میں بہت اہم ہے۔

کرکٹ میں مردوں کے مقابلے اکیس تاریخ سے شروع ہوں گے۔

اسی بارے میں