رنگارنگ تقریب میں ایشین گیمز کا اختتام

Image caption اختتامی تقریب میں چینی فنکاروں نے اپنے فن کا مظاہرہ کیا

چین کے شہرگوانگزو میں منعقدہ ایک رنگارنگ تقریب میں سولہویں ایشیائی کھیل اپنے اختتام کو پہنچ گئے ہیں۔

دو ہفتے جاری رہنے والے ان کھیلوں میں میزبان چین نے چار سو سولہ تمغوں کے ساتھ پہلی پوزیشن حاصل کی۔

چین کے چار سو سولہ تمغوں میں ایک سو ننانوے طلائی تمغے بھی شامل ہیں اور یہ اب تک منعقد ہونے والے ایشیائی کھیلوں میں چین کی بہترین کارکردگی ہے۔

اختتامی تقریب کی تصاویر

سنیچر کو کھیلوں کے آخری دن آخری طلائی تمغہ بھی چین کے ہی حصے میں اس وقت آیا جب چین کی خواتین کی والی بال ٹیم نے فائنل میں فتح حاصل کر کے اپنے ملک کو گولڈ میڈل دلوایا۔

ان کھیلوں میں دوسری پوزیشن جنوبی کوریا نے 232 تمغوں کے ساتھ حاصل کی جن میں سے چھہتر طلائی تمغے تھے۔ تیسری پوزیشن پر جاپان رہا جس نے اڑتالیس طلائی اور کل 216 تمغے حاصل کیے۔

پاکستان نے ان کھیلوں میں کل آٹھ تمغے جیتے۔ پاکستان کی جانب سے سکواش، ہاکی اور خواتین کے کرکٹ مقابلوں میں ٹیموں نے طلائی تمغے حاصل کیے جبکہ سکواش کے انفرادی مقابلوں اور ووشو میں پاکستان نے نقرئی تمغے جیتے۔

بھارت نے ان کھیلوں میں کل چونسٹھ میڈل جیتے جن میں چودہ طلائی، سترہ نقرئی اور کانسی کے تینتیس تمغے شامل ہیں۔ ان تمغوں کی بدولت بھارت ان گیمز میں چھٹے مقام پر رہا جبکہ پچھلی بار دوہا کے ایشیائی کھیلوں میں وہ آٹھویں درجے پر تھا۔

2014 کے ایشیائی کھیل جنوبی کوریا کے شہر انچیون میں منعقد ہوں گے۔

اسی بارے میں