انڈیا نے جنوبی افریقہ کو ہرا دیا

Image caption انڈیا کی طرف سے یوراج سنگھ تریپن رنز بنا کر ٹاپ سکورر رہے۔

جوہانسبرگ میں کھیلے گئےدوسرے ایک روزہ انٹرنیشنل میچ میں انڈیا نے جنوبی افریقہ کو ایک سنسنی خیز مقابلے کے بعد ہرا دیا ہے۔

انڈیا کے کپتان مہندر سنگھ دھونی نے ٹاس جیت کر بیٹنگ کرنے کا فیصلہ کیا لیکن انڈیا کی پوری ٹیم 190 کے مجموعی سکور پر آؤٹ ہو گئی اور جنوبی افریقہ کو ایک 191 رنز کا ہدف ملا۔

جنوبی افریقہ کی پوری ٹیم ایک سو اننانوے بنا کر آؤٹ ہوگئی اور اس طرح بھارت نے پانچ میچوں کی سیریز کو ایک ایک سے برابر کر دیا ہے۔

بھارت کی جانب سے میڈیم فاسٹ بولر مناف پٹیل نے عمدہ بولنگ کا مظاہرہ کیا اور جنوبی افریقہ کے چار کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا۔

جنوبی افریقہ کو اپنی اننگز کے ابتدائی اووروں میں ہی پہلا نقصان اٹھانا پڑا جب ہاشم آملہ سات کےمجموعی سکور پر آؤٹ ہوگئے۔ کپتان گریم سمتھ نے عمدہ کھیل کا مظاہرہ کرتے ہوئے انگرام کے ساتھ ملکر ٹیم کا سکور سڑسٹھ تک لےگئے جب جنوبی افریقہ کی دوسری وکٹ گری۔

اس کے بعد جنوبی افریقہ کی وکٹیں تواتر کے ساتھ گرتی رہیں اور آخری کھلاڑی ڈبلیو ڈی پارنل آؤٹ ہوگئے۔ مناف پیٹل نے جنوبی افریقہ کی اننگز کی پہلی اور آخری وکٹ حاصل کی۔

مناف پیٹل نے چار، ظہیر خان نے دو وکٹیں حاصل کیں۔ اشیش نہرا، ہربھجن سنگھ اور روہیت شرما نے ایک ایک کھلاڑی کو آؤٹ کیا۔

انڈیا نے پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے سینتالیس اوورز میں ایک سو نوے رنز بنائے۔ یوراج سنگھ تریپن رنز بنا کر ٹاپ سکورر رہے۔ جنوبی افریقہ کی طرف سے ٹسوبے نے مقررہ دس اووروں میں بائیس رنز دے کر چار کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا۔

جنوبی افریقہ کی طرف سے مونی مورکل اور ڈیل سٹین نے دو دو وکٹیں لیں۔

انڈیا کی پہلی وکٹ اکیس رنز پر گِری جب اوپنر وجے سولہ رنز بنا کر ٹسوبے کی گیند پر مونی مورکل کے ہاتھوں کیچ ہوئے۔

انڈیا کی طرف سے دوسرے آؤٹ ہونے والے کھلاڑی ورات کوہلی تھے جو بائیس رنز بنا کر رن آؤٹ ہوئے۔

انڈیا کی تیسرے وکٹ سڑسٹھ کے سکور پر گری جب سچن ٹنڈلکر چوبیس رنز بنا کر بوتھا کی گیند پر بولڈ ہوئے۔

انڈیا کی چوتھی وکٹ ایک سو پچاس رنز پر گِری جب یوراج تریپن رنز بنا کر ٹسوبے کی گیند پر ڈیرل سٹین کے ہاتھوں کیچ ہوئے۔

انڈیا کی آخری چھ وکٹیں صرف چالیس رنز کے اضافے کے بعد گِر گئیں۔ آؤٹ ہونے والے کھلاڑی رائنا، دھونی، ہربھجن سنگھ، ظہیر خان، شرما اور نہرا جو ٹیم کے مجموعی سکور میں کوئی قابلِ قدر اضافہ نہ کر سکے۔

اسی بارے میں