پرتھ ٹیسٹ میں بھی بھارت کو اننگز کی شکست

تصویر کے کاپی رائٹ BBC World Service
Image caption بین ہلفنہاس نے اس میچ میں آٹھ وکٹیں حاصل کیں

آسٹریلیا نے بھارت کو تیسرے کرکٹ ٹیسٹ میں ایک اننگز اور سینتیس رنز سے شکست دے کر چار میچوں کی ٹیسٹ سیریز میں تین صفر کی فیصلہ کن برتری حاصل کر لی ہے۔

یہ بیرونِ ملک کھیلے گئے ٹیسٹ میچوں میں بھارت کی لگاتار ساتویں شکست ہے۔ اس سے قبل دو ہزار گیارہ کے موسمِ گرما میں اسے انگلینڈ کے خلاف ٹیسٹ سیریز میں چار صفر سے شکست ہوئی تھی۔

میچ کا تفصیلی سکور کارڈ

پرتھ میں بھارت کو اننگز کی شکست سے بچنے کے لیے دو سو آٹھ رنز کی ضرورت تھی لیکن اس کی پوری ٹیم کھیل کے تیسرے دن ایک سو اکہتر رنز بنا کر آؤٹ ہوگئی۔

بھارتی بلے بازوں میں ویرات کوہلی اور راہول ڈراوڈ کے علاوہ کوئی بھی وکٹ پر نہ جم سکا۔

کوہلی نے نصف سنچری بنائی اور پچھہتر رن بنا کر آؤٹ ہوئے جبکہ ڈراوڈ نے سینتالیس رنز بنائے۔ ان دونوں نے پانچویں وکٹ کے لیے چوراسی رنز کی شراکت قائم کی۔

تیسرے دن کھانے کے وقفے پر بھارت کو اننگز کی شکست سے بچنے کے لیے تینتالیس رنز درکار تھے اور اس کی چار وکٹیں باقی تھیں۔

بھارت کی ساتویں، آٹھویں اور نویں وکٹ کھانے کے وقفے کے بعد پہلے ہی اوور میں اس وقت گری جب ہلفنہاس نے ونے کمار، ظہیر خان اور ایشانت شرما کو کیچ کروا دیا۔

اگلے ہی اوور میں سڈل نے کوہلی کو آْؤٹ کر کے اپنی ٹیم کو لگاتار تیسرے ٹیسٹ میں فتح دلوا دی۔

تصویر کے کاپی رائٹ BBC World Service
Image caption اس سیریز میں بھارتی بلے باز بری طرح ناکام رہے ہیں

آسٹریلیا کی جانب سے دوسری اننگز میں بین ہلفنہاس نے چار، پیٹر سڈل نے تین اور سٹارک نے دو وکٹیں لیں جبکہ ہیرس نے ایک کھلاڑی کو آؤٹ کیا۔

جمعہ کو شروع ہونے والے ٹیسٹ میں آسٹریلیا نے ٹاس جیت کر بھارت کو پہلے کھیلنے کی دعوت دی تھی اور بھارتی ٹیم پہلی اننگز میں ایک سو اکسٹھ رنز بنا سکی تھی۔

اس کے جواب میں ڈیوڈ وارنر کی شاندار سنچری کی بدولت آسٹریلیا نے اپنی پہلی اننگز میں تین سو انہتر رنز بنائے تھے اور یوں اسے دو سو آٹھ رنز کی برتری حاصل ہوئی تھی۔

چار میچوں کی اس ٹیسٹ سیریزکا پہلا ٹیسٹ آسٹریلیا نے ایک سو بائیس رنز جبکہ دوسرا ایک اننگز اور اڑسٹھ رنز سے جیتا تھا۔

سیریزکا چوتھا اور آخری ٹیسٹ چوبیس جنوری سے ایڈیلیڈ میں شروع ہوگا۔

اسی بارے میں