بھارتی ہاکی ٹیم پاکستان نہیں آئے گی

تصویر کے کاپی رائٹ AFP
Image caption وزارتِ خارجہ نے نامناسب حالات کو دورے کی اجازت نہ دینے کی وجہ قرار دیا ہے

بھارتی حکومت نے اپنی ہاکی ٹیم کو پاکستان کا دورہ کرنے کی اجازت دینے سے انکار کر دیا ہے۔

ہاکی انڈیا نے پاکستان ہاکی فیڈریشن کو مطلع کردیا ہے کہ بھارتی وزارتِ خارجہ نے بھارتی ہاکی ٹیم کو پاکستان کے دورے کی اجازت نہیں دی۔

قابلِ ذکر بات یہ ہے کہ انڈین اسپورٹس اتھارٹی نے بھارتی ہاکی ٹیم کو پاکستان کے دورے کی اجازت دے دی تھی تاہم دورے کا انحصار وزارت خارجہ کی منظوری پر تھا۔

بھارت وزارتِ خارجہ کے خیال میں پاکستان میں حالات اس دورے کے لیے مناسب نہیں ہیں۔ پاکستان ہاکی فیڈریشن کے سیکریٹری آصف باجوہ نے اس صورتحال پر مایوسی ظاہر کی ہے۔

واضح رہے کہ پاکستان ہاکی فیڈریشن نے سات سے چودہ اپریل تک لاہور میں چار قومی ہاکی ٹورنامنٹ کے انعقاد کا پروگرام بنایا تھا جس کے لیے اس نے بھارت، جنوبی افریقہ اور ملائشیا کو دعوت دی تھی۔

نامہ نگار عبدالرشید شکور کے مطابق جنوبی افریقہ کی طرف سے جواب نہ ملنے کے بعد اس ایونٹ کو تین ملکی ٹورنامنٹ کے طور پر دیکھا جارہا تھا لیکن ملائیشین ٹیم بھی اپنی ہاکی فیڈریشن کے اندرونی معاملات کے سبب پاکستان نہیں آرہی ہے۔

پاکستان اور بھارت کے درمیان آخری بار دو طرفہ ہاکی سیریز2006 میں کھیلی گئی تھی جس کے تین میچز پاکستان اور تین میچز بھارت میں کھیلے گئے تھے اور وہ سیریز پاکستان نے جیتی تھی۔

دونوں ملکوں کے درمیان کرکٹ روابط پہلے ہی تعطل کا شکار ہیں البتہ سنوکر اور دوسرے کھیلوں میں کھلاڑی ایک دوسرے کے ملکوں میں جاکر کھیلتے رہے ہیں۔

اسی بارے میں