یوسین بولٹ کی تاریخ ساز فتح

تصویر کے کاپی رائٹ Reuters
Image caption دو میٹر دوڑ کے تینوں تمغے جمیکا کے اتھلیٹس نے حاصل کیے ہیں۔

لندن اولمپكس میں جمیكا کے يوسین بولٹ سو اور دو سو میٹر کی دوڑ کے مقابلے جیت اپنے اعزازات کے دفاع میں کامیاب ہو گئے ہیں۔

لندن اولمپكس میں ایتھلیٹکس کے سب سے اہم مقابلے مردوں کی دو سو میٹر دوڑ میں جمیكا کے يوسین بولٹ نے سونے کا تمغہ حاصل کیا ہے وہ اس سے پہلے سو میٹر کی دوڑ میں بھی طلائی تمغہ حاصل کر چکے ہیں۔

يوسین بولٹ نے دو سو میٹر کی دوڑ انیس اعشاریہ تین دو سیکنڈ میں مکمل کی۔

دفاعی چیمپیئن یوسین بولٹ نے اس دوڑ میں فتح حاصل کر کے ایک نئی تاریخ رقم کی ہے۔ وہ اولمپکس تاریخ میں ایسے کھلاڑی بن گئے ہیں جنہوں نے سو میٹر اور دو سو میٹر دوڑ جیتنے کا اعزاز مسلسل دو بار حاصل کیا ہے۔

بولٹ نے دو ہزار آٹھ کے بیجنگ اولمپکس میں بھی سو اور دو سو میٹر کی دوڑ میں طلائی تمغہ جیتا تھا۔

اس دوڑ میں دوسرے نمبر آنے والے اتھلیٹ جمیكا کے ہی يوہان بلیک ہیں جنہوں نے یہ دوڑ انیس اعشاریہ چار چار سیکنڈ میں پوری کی۔ جبکہ تیسرے نمبر پر آنے والے اتھیلیٹ بھی جمیکا کے ہی ہیں۔ وارن ویير نے یہ فاصلہ انیس اعشاریہ آٹھ چار سیکنڈ میں پوری کیا۔

لندن اولمپک کی سو میٹر دوڑ میں اپنی بادشاہت برقرار رکھتے ہوئے يوسین بولٹ نے یہ دوڑ نو اعشاریہ چھ تین سیکنڈ میں پوری کی تھی۔ یہ ان کا دوسرا سب سے تیز وقت تھا۔

بولٹ نے بیجنگ اولمپکس میں بھی سو میٹر اور دو سو میٹر کی دوڑ کا طلائی تمغہ اپنے نام کیا تھا۔

اس جیت کے بعد جہاں سٹیڈیم میں شائقین يوسین بولٹ کی تصاویر کھینچ رہے تھے وہیں يوسین بولٹ نے بھی کیمرے اٹھایا اور شائقین اور میڈیا کے تصاویر اتارنا شروع کر دیں۔

اسی بارے میں