’آرمسٹرانگ، الزامات کے خلاف تگ ودو ترک‘

آخری وقت اشاعت:  جمعـء 24 اگست 2012 ,‭ 07:22 GMT 12:22 PST

آرمسٹرانگ نے جولائی سال دو ہزار پانچ میں ساتویں مرتبہ ٹور دی فرانس جیتنے کے بعد ریٹائرمنٹ کا اعلان کیا تھا

امریکہ کے سائکلنگ سٹار لانس آرمسٹرانگ نے ممنوعہ ادویات کے استعمال کے الزامات کے خلاف اپنی تگ ودو ترک کرنے کا اعلان کیا ہے۔

چالیس سالہ لانس آرمسٹرانگ کی جانب سے جاری ہونے والے ایک بیان میں وہ اپنے بے قصور ہونے کے موقف پر قائم رہے لیکن اس کے ساتھ کہا کہ وہ اپنے اوپر لگے فضول الزامات سے تنگ آ گئے ہیں۔

امریکہ کی اینٹی ڈوپنگ ایجنسی’یو ایس اے ڈی اے‘ کا کہنا ہے کہ وہ لانس آرمسٹرانگ پر تاحیات پابندی لگائے گی اور ان کے ٹور ڈی فرانس کے اعزازات واپس لے رہی ہے۔‘

لانس آرمسٹرانگ سال دو ہزار گیارہ میں پیشہ وارانہ کھیل سے ریٹائرڈ ہو گئے تھے۔

یو ایس اے ڈی اے کے مطابق لانس آرمسٹرانگ نے سنہ انیس سو چھیانوے میں ممنوعہ ادویات کا استعمال کیا تھا۔

لانس آرمسٹرانگ نے ان الزامات کے خلاف فیڈرل کورٹ میں کیس دائر کیا گیا لیکن وہ یہ مقدمہ ہار گئے۔

بیان کے مطابق’ ہر آدمی کی زندگی میں ایک ایسا موڑ آتا ہے جہاں وہ کہتا ہے کہ بس اب بہت ہو گیا اور میرے پر بھی یہ وقت آ گیا ہے۔‘

’سنہ انیس سو ننانوے میں اپنے اوپر لگے دھوکے اور سات بار غیر منصفانہ طریقے سے اعزاز حاصل کرنے کرنے کے الزامات سے نمٹ رہا ہوں۔‘

اینٹی ڈوپنگ ایجنسی کے مطابق لانس آرمسٹرانگ کے دس ساتھی ان کے خلاف گواہی دینے کے لیے تیار ہیں۔

دوسری جانب لانس آرمسٹرانگ نے ایجنسی پر الزام عائد کیا ہے کہ وہ کھلاڑیوں کو غلط طریقے سے مراعات دے رہی ہے۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔