پیرالمپکس مشعل کا سفر اختتامی مراحل میں

آخری وقت اشاعت:  بدھ 29 اگست 2012 ,‭ 15:48 GMT 20:48 PST

لندن پیرالمکپس کی افتتاحی تقریب تک مشعل کو لیجانے کے لیے پانچ سو اسی افراد کا انتخاب کیا گیا ہے۔

دو ہزار بارہ کے پیرالمپکس کی افتتاحی تقریب مشترقی لندن میں واقع اولمپکس سٹیڈیم میں بدھ کی شام منعقد ہو رہی ہے۔

اس تقریب میں ملکۂ برطانیہ کے ساتھ ڈیوک آف کیمبرج شہزادہ ولیم اور ان کی اہلیہ ڈچز آف کیمبرج شہزادی کیتھرین مڈلٹن بھی شریک ہوں گے۔

افتتاحی تقریب مقامی وقت کے مطابق رات آٹھ بج کر تیس منٹ پر منعقد ہو گی جس میں ملکۂ برطانیہ ہی باقاعدہ طور پر ان کھیلوں کے آغاز کا اعلان کریں گی۔

لندن پیرالمپکس کے لیے چوبیس گھنٹوں کی ایک مشعل بردار ریلی کا آغاز سٹوک مینڈیویل کے علاقے میں منگل کی شام کو ہوا۔

پیرالمپکس کی مشعل کے سفر کے آغاز کے موقع پر بڑی تعداد میں لوگ بکنگھم شائر کے علاقے ایلزبری کے مارکیٹ سکوائر میں جمع ہوئے جبکہ ہزاروں افراد نے پیرالمکپس کی مشعل کے راستے کے دونوں طرف جمع ہو کر مشعل کا استقبال کیا جو کہ کھیلوں کی افتتاحی تقریب میں روشن کی جائے گی۔

مشعل کے سفر کے لیے کْل پانچ سو اسی افراد کو چنا گیا ہے جو اس مشعل کو مختلف اوقات میں اٹھائیں گے۔

لندن پہنچنے پر مشعل کو برطانیہ کے علاقے برینٹ میں واقع پہلے روایتی ہندو مندر شری سوامی نارائن کی سیڑھیوں پر لیجایا گیا۔ برینٹ کے ممبر پارلیمنٹ بیری گارڈنر نے اس تقریب میں حصہ لیا جہاں مندر میں مشعل روشن کی گئی۔

انہوں نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ’یہ ایک خاص موقع ہے۔ ہم صبح ساڑھے چھ بجے سے انتظار کر رہے ہیں اور اس موقع پر جوش وخروش اور گرم جوشی زبردست ہے۔ میں نہیں سمجھتا کہ کبھی اس طرح کا ماحول کسی بھی اولمپکس یا پیرالمپکس مشعل نے دیکھا ہو گا‘۔

"یہ ایک خاص موقع ہے۔ ہم صبح ساڑھے چھ بجے سے انتظار کر رہے ہیں اور اس موقع پر جوش وخروش اور گرم جوشی زبردست ہے۔ میں نہیں سمجھتا کہ کبھی اس طرح کا ماحول کسی بھی اولمپکس یا پیرا لمپکس مشعل نے دیکھا ہو گا۔"

بیری گارڈنر ممبر پارلیمنٹ

لندن پیرالمپکس کی ترجمان نے کہا ہے کہ ’ہر جگہ کے لوگوں کا مشعل کے استقبال کا اپناطریقہ تھا‘۔

مشعل اپنے مقررہ وقت سے ایک گھنٹہ تیس منٹ دیر سے جا رہی ہے جس کو کم کرنے کے لیے منتظمین نے وقفے کم کرنے کا فیصلے کیا ہے۔

لندن اولمپکس کی انتظامیہ نے اس بارے میں کہا کہ ’یہ تاخیر سٹوک مینڈی ویلے میں تقریب کے دیر سے اختتام پذیر ہونے کی وجہ سے ہوئی اور مختلف افراد کے مشعل اٹھانے کی تبدیلی میں تاخیر کی وجہ سے ہوا ہے۔ ہم نے رات کے دوران مشعل کی تبدیلی کے عمل کو مزید بہتر کیا ہے اور ہم وقت کے معاملے میں بہتری پیدا کر رہے ہیں‘۔

انگلینڈ، سکاٹ لینڈ، ناردرن آئرلینڈ اور ویلز کی نمائندگی کرتی ہوئی مشعلوں کی مدد سے اولمپک ویلج میں ایک بڑا الاؤ روشن کیا جائے گا۔

برطانیہ کے چینل فور نے ان کھیلوں کو ناظرین تک پہنچانے کے لیے کافی کوششیں کی ہیں تاکہ ان کھیلوں کی پہلے سے زیادہ افراد تک رسائی ہو سکے۔ چینل فور نے برطانوی ناظرین کو پانچ سو گھنٹوں سے زیادہ کی نشریات مہیا کرنے کا وعدہ کیا گیا ہے۔

اسی بارے میں

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔