ٹی ٹوئنٹی: سپر اوور میں ویسٹ انڈیز فاتح

آخری وقت اشاعت:  پير 1 اکتوبر 2012 ,‭ 14:23 GMT 19:23 PST

پالیکلے میں کھیلے جانے اس میچ میں نیوزی لینڈ نے ٹاس جیت کر ویسٹ انڈیز کو پہلے بیٹنگ کرنے کی دعوت دی تھی

ورلڈ ٹی ٹوئنٹی مقابلوں کے سپر ایٹ مرحلے کے ایک میچ میں ویسٹ انڈیز نے ایک سنسنی خیز مقابلے کے بعد نیوزی لینڈ کو سپر اوور میں شکست دے دی۔

میچ ٹائی ہونے کے بعد فیصلہ سپر اوور کے ذریعے کیا گیا جس میں نیوزی لینڈ نے پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے سترہ رنز بنائے جس کے جواب میں ویسٹ انڈیز کے بلے بازوں نے سپر اوور کی پانچویں گیند پر مطلوبہ ہدف حاصل کر لیا۔

اس شکست کے بعد نیوزی لینڈ کی ٹیم ورلڈ ٹی ٹوئنٹی مقابلوں سے باہر ہو گئی ہے۔

کلِک میچ کا تفصیلی سکور کارڈ

اس سے قبل پالیکلے میں کھیلے جانے والے میچ میں ویسٹ انڈیز نے پہلے کھیلتے ہوئے نیوزی لینڈ کو ایک سو چالیس رنز کا ہدف دیا اور نیوزی لینڈ کی ٹیم مقررہ بیس اوورز میں سات وکٹوں کے نقصان پر ایک سو انتالیس رنز بنا سکی۔

نیوزی لینڈ کی جانب سے راس ٹیلر نے چالیس گیندوں پر تین چوکوں اور تین چھکوں کی مدد سے ناقابلِ شکست باسٹھ رنز بنائے۔

نیوزی لینڈ کے دوسرے نمایاں بلے باز برینڈن مکلم رہے، انہوں نے بائیس رنز بنائے۔

ویسٹ انڈیز کی جانب سے سنیل نائران نے تین جبکہ رام پال اور ڈیرن سامی نے ایک ایک کھلاڑی کو آؤٹ کیا۔

پالیکلے میں کھیلے جانے اس میچ میں نیوزی لینڈ نے ٹاس جیت کر ویسٹ انڈیز کو پہلے بیٹنگ کرنے کی دعوت دی تھی۔

ویسٹ انڈیر کی پوری ٹیم انیس اعشاریہ تین اوورز میں ایک سو انتالیس رنز بنا سکی۔

ویسٹ انڈیز کا آغاز اچھا نہ تھا اور صرف ستاسی رنز کے مجموعی سکور پر اس کے چار کھلاڑی پویلین لوٹ گئے۔

ویسٹ انڈیز کی جانب سے کرس گیل نے تیس اور پولارڈ نے اٹھائیس رنز بنائے۔

نیوزی لینڈ کی جانب سے بریس ویل اور ٹم سودی نے تین تین، جبکہ نیتھن مکلم نے دو کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔