آئن بوتھم اور سٹیورٹ براڈ کی نوک جھوک

آخری وقت اشاعت:  پير 19 نومبر 2012 ,‭ 16:45 GMT 21:45 PST
ایان بوتھم

بوتھم اور براڈ نے ایک دوسرے پر نکتہ چینی کی۔

سر آئن بوتھم نے سٹیورٹ براڈ کی جانب سے ایک ٹویٹ میں سابق کھلاڑیوں کی کارکردگی پر سوال اٹھائے جانے پر شدید غضے کا اظہار کیا ہے۔

پہلے ٹیسٹ میچ میں بھارت کے ہاتھوں شکست کے بعد سٹیورٹ بروڈ نے ٹویٹ کیا کہ ’اس سے پہلے کہ اس بارے میں آپ متعدد سابق ماہر کھلاڑیوں کی منفی رائے کو سنیں ان سے یہ ضرور پوچھ لیں کہ کیا پچھلے 28 سالوں میں انہوں نے خود کبھی بھارت سے کوئی ٹیسٹ سریز جیتی ہے‘۔

اس کے جواب میں بوتھم نے ایک ٹویٹ بھیجا جس میں دوسرے ممالک میں ان کی کارکردگی پر نکتہ چینی کی۔

انگلینڈ کے لیے سب سے زیادہ وکٹ لینے والے بوتھم نے سکائی سپورٹ کے لیے میچ کے بعد ہونے والے تجزیہ میں جس ٹیم کا ذکر کیا تھا اس میں براڈ کا نام شامل نہیں کیا تھا۔

بھارت کے خلاف پہلے ٹیسٹ میں احمد آباد میں براڈ کوئی بھی وکٹ لینے میں ناکام رہے تھے اور کھیل کے آخری دن انہیں محض تین رنز پر آؤٹ کر دیا گیا تھا۔

اس میچ میں انگلینڈ کو بھارت کے ہاتھوں نو وکٹ سے شکست ہوئی تھی۔

بوتھم نے دوسرے ٹیسٹ میچ کے لیے انگلینڈ ٹیم میں تین تبدیلیوں کا مشورہ دیا ہے۔ دوسرا ٹیسٹ جمعہ کو ممبئی میں شروع ہونے والا ہے۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔