کولکتہ ٹیسٹ میں بھارت کو شکست

آخری وقت اشاعت:  اتوار 9 دسمبر 2012 ,‭ 09:54 GMT 14:54 PST
الیسٹيئر کک

انگلینڈ کے کپتان الیسٹر کوک کو اس میچ میں بہترین کارکردگی پر مین آف دی میچ قرار دیا گیا

کولکتہ میں کھیلے گئے تیسرے ٹیسٹ میچ میں انگلینڈ نے بھارت کو سات وکٹ سے شکست دے کر چار میچوں کی سیریز میں دو ایک کی سبقت حاصل کر لی ہے۔

میچ کے پانچویں دن بھارت اپنے سکور میں مزید آٹھ رنز کا اضافہ کرنے کے بعد آؤٹ ہو گئی اور اس طرح انگلینڈ کو جیت کے لیے اکتالیس رنز کا ہدف ملا جو اس نے تین وکٹ کے نقصان پر حاصل کر لیا۔ نک کومپٹن اور ایئن بیل نے بالترتیب نو اور اٹھائیس رنز بنائے اورآؤٹ نہیں ہوئے۔

پانچویں دن انگلینڈ کی پہلی وکٹ ایشون نے لی جب انھوں نے انگلینڈ کے کپتان الیسٹر کوک کو ایک رن پر آؤٹ کر دیا۔ جوناتھن ٹراٹ تین رنز پرگیان اوجھا کا شکار بنے تو کیون پیٹرسن صفر پر ایشون کی گیند پر آؤٹ ہو گئے۔

انگلینڈ کے کپتان الیسٹر کوک کو پہلی اننگز میں شاندار ایک سو نوے رنز بنانے کے لیے مین آف دی میچ کے اعزاز سے نوازا گیا۔ انھوں نے اس سیریز میں اپنی تیسری اور کپتان بننے کے بعد لگاتار پانچویں سنچری بنائی۔

کلِک میچ کا تفصیلی سکور کارڈ

چوتھے دن کے کھیل کے خاتمے پر بھارتی ٹیم شدید مشکلات سے دو چار تھی اور اس نے نو وکٹوں کے نقصان پر دو سو انتالیس رنز بنائے تھے اور اسے انگلینڈ پر صرف بتیس رنز کی سبقت حاصل تھی۔

انگلینڈ کے بالروں نے شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کیا

آٹھویں نمبر کے بلے باز رام چندر ایشون کی عمدہ بیٹنگ کی بدولت بھارتی ٹیم اننگز کی شکست سے بچ گئي۔آخری آؤٹ ہونے والے کھلاڑی پرگیان اوجھا تھے جنہیں اینڈر سن نے تین رنز پر آؤٹ کیا۔ بھارت کی جانب سے سب سے زیادہ اکیانوے رنز ان کے سپنر ایشون نے بنائے اور وہ آؤٹ نہیں ہوئے۔

انگلینڈ کی جانب سے جیمز اینڈرسن اور سٹیون فن نے تین تین وکٹ لیے جبکہ گریم سوان اور مانٹی پنیسر کو بالترتیب دو اور ایک وکٹ ملے۔

اس سے قبل انگلینڈ کی ٹیم اپنی پہلی اننگز میں لنچ سے قبل کل پانچ سو تئیس رنز بنا کر آؤٹ ہوگئی اور اسے دو سو سات رن کی برتری حاصل ہوئي۔

دوسری اننگز میں بھارتی اوپنرز نے ٹیم کو چھیاسی رنز کا آغاز دیا۔ گوتم گمبھیر اور وریندر سہواگ نے ابتدا میں سنبھل کر بیٹنگ کی لیکن جب سہواگ کا انفرادی سکور انچاس پر پہنچا توگریم سوان نے انہیں بولڈ کر دیا۔

اس کے فوراً بعد پجارا صرف آٹھ رن بنا کر رن آؤٹ ہوگئے۔ تیسری وکٹ گوتم گمبھیر کی گری جو فن کی گیند پر کیچ آؤٹ ہوئے۔ انہوں نے چالیس رنز بنائے۔

سچن تندولکر بھی زيادہ دیر تک نہیں ٹکے اور پانچ رنز بنا کر سوان کی دوسری وکٹ بنے۔ یوراج سنگھ سترہ گيندوں پر صرف گيارہ رنز بنا سکے اور اینڈرسن کی گیند پر بولڈ ہوگئے۔

کپتان مہندر سنگھ دھونی بغیر کوئي رن بنائے ہی اینڈرسن کا دوسرا شکار بنے۔ چائے کے وقفے کے فوراً بعد ویرات کوہلی کو بیس رن پر فن نے کیچ کروا دیا۔ ظہیر خان کو ایل بی ڈبلیو کر کے فن نے تیسری وکٹ حاصل کی۔

ایشانت شرما نے ایشون کا کافی دیر تک ساتھ دیا اور ستاون بالوں پر دس رنز بنائے لیکن انہیں بھی مونٹی پنیسر نے بولڈ کر دیا۔

بدھ کو شروع ہونے والے ٹیسٹ میچ میں بھارت نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کرنے کا فیصلہ کیا تھا اور اپنی پہلی اننگز میں تین سو سولہ رنز بنائے تھے جس میں سچن تندولکر کے چھہتر جبکہ گوتم گمبھیر کے ساٹھ رنز بھی شامل تھے۔

احمد آباد میں کھیلے جانے والے پہلے ٹیسٹ میں بھارت نے انگلینڈ کو نو وکٹوں سے شکست دی تھی جبکہ ممبئی ٹیسٹ میں انگلینڈ نے دس وکٹوں سے جیت کر کے سیریز برابر کر دی تھی۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔