’نوجوانوں کو قیادت سونپنے کا وقت آ گیا‘

آخری وقت اشاعت:  جمعرات 13 دسمبر 2012 ,‭ 09:31 GMT 14:31 PST

سری لنکا کی کرکٹ ٹیم کے کپتان مہیلا جے وردھنے نے اعلان کیا ہے کہ وہ دورۂ آسٹریلیا کے بعد کپتانی سے دستبردار ہوجائیں گے۔

پینتیس سالہ بیٹسمین جے وردھنے کا کہنا ہے کہ وقت آ گیا ہے کہ ٹیم کی قیادت نائب کپتان اینجلو میتھیوز کے حوالے کی جائے۔

’میں آسٹریلیا کے دورے کے بعد کپتانی نہیں کرنا چاہتا۔ امید ہے کہ مجھے دوبارہ کپتانی کے لیے نہیں کہا جائے گا۔‘

جے وردھنے گزشتہ برس اکتوبر میں ہونے والے ورلڈ ٹی ٹوئنٹی کے بعد ٹی ٹوئنٹی ٹیم کی کپتانی سے دستبردار ہوگئے تھے۔

انہیں رواں سال جنوری میں دوسری بار ٹیسٹ اور ون ڈے میں ٹیم کے کپتان بنائے گئے تھے۔ انہیں تلکارتنے دلشن کی جگہ کپتانی ملی تھی۔

ہوبارٹ میں کھیلا جانے والا ٹیسٹ میچ جے وردھنے کا ایک سو چھتیسواں ٹیسٹ میچ ہوگا۔ ’ہمیں ایک نوجوان قیادت کی ضرورت ہے اور سری لنکا کی ٹیم میں آسان ہے کہ ایک نوجوان کپتان اس وقت آئے جب سینیئر کھلاڑی ٹیم میں موجود ہوں تاکہ وہ مدد کر سکیں‘۔

مہیلا جے وردھنے کا کہنا ہے کہ پچیس سالہ نائب کپتان میتھیوز کپتان کے طور پر اچھے رہیں گے۔ ’میتھیوز وہ کھلاڑی ہیں جن کے بارے سب کا خیال ہے کہ وہی کپتان ہوں گے۔‘

انہوں نے مزید کہا کہ اگر میتھیوز کو کپتان بنایا جاتا ہے تو کپتانی کی منتقلی آسان رہے گی۔ ’ٹیم میں کمار سنگاکارا، دلشن اور میں موجود ہوں گا اور سخت حالات میں ہم اس کی اصلاح کرسکیں گے اور وہ اسی طرح سیکھے گا۔‘

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔