تیسرے ون ڈے میں سری لنکا کی فتح

آخری وقت اشاعت:  جمعـء 18 جنوری 2013 ,‭ 08:05 GMT 13:05 PST

 

100 50 0

 

100 50 0

 

تازہ ترین سکور اور گروپ ٹیبلز کے لیے آپ کے پاس جاواسکرپٹ ہونا چاہیئے

سری لنکا نے تیسرے ایک روزہ میچ میں آسٹریلیا کو چار وکٹوں سے شکست دے کر سیریز میں دو ایک برتری حاصل کر لی ہے۔

برسبین میں کھیلے جانے والے اس میچ میں آسٹریلوی کپتان نے ٹاس جیت کر پہلے کھیلنے کا فیصلہ کیا جو درست ثابت نہ ہو سکا اور پوری آسٹریلوی ٹیم صرف چوہتر رنز بنا کر آؤٹ ہوگئی۔

آسٹریلیا کی ابتدائی نو وکٹیں صرف چالیس کے مجموعی سکور پر گر گئی تھیں اور یوں لگتا تھا کہ آسٹریلیا ایک روزہ کرکٹ میں اپنے سب سے کم سکور پر آؤٹ ہو جائے گا۔

تاہم آخری وکٹ کے لیے مچل سٹارک اور زیویئر ڈورتھی کی چونتیس رنز کی شراکت نے سکور چوہتر تک پہنچا دیا

سری لنکن فاسٹ بولرز خصوصاً نوان کلاسیکرا نے اس میچ میں شاندار سوئنگ بولنگ کا مظاہرہ کیا ہے اور پانچ وکٹیں حاصل کیں۔ ان کے علاوہ لستھ ملنگا تین وکٹیں لے کر نمایاں رہے۔

نوان کلاسیکرا نے میچ میں شاندار سوئنگ بولنگ کا مظاہرہ کرتے ہوئے پانچ وکٹیں لیں

جواب میں سری لنکا کا آغاز بھی اچھا نہ تھا اور اس کی پہلی وکٹ صرف چار رنز پر گر گئی جبکہ سینتیس کے مجموعی سکور پر اس کی چار وکٹیں گر چکی تھیں۔

اس کے بعد تھارنگا اور تھشارا پریرا نے ذمہ دارانہ بلے بازی کی اور سکور تریسٹھ تک پہنچا دیا تاہم اس موقع پر تھارنگا بارہ رن بنا کر آؤٹ ہوگئے۔

ان کی جگہ آنے والے جیون مینڈس دو رن بنا سکے تاہم اس کے بعد تھشارا پریرا نے کشال پریرا کے ساتھ مل کر مزید کسی نقصان کے بغیر اپنی ٹیم کو فتح سے ہمکنار کروا دیا۔

آسٹریلیا کی جانب سے مچل جانسن نے تین، مچل سٹارک نے دو جبکہ میک کے نے ایک وکٹ حاصل کی۔

پانچ میچوں کی اس سیریز کا چوتھا میچ بیس جنوری کو سڈنی میں کھیلا جائے گا۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔