جوہانسبرگ میں افریقن کپ آف نیشنز کا آغاز

آخری وقت اشاعت:  اتوار 20 جنوری 2013 ,‭ 01:53 GMT 06:53 PST

اس ٹورنامنٹ میں سولہ افریقی ممالک شرکت کر رہے ہیں

جنوبی افریقہ کے شہر جوہانسبرگ میں فٹبال کے مقابلوں کا ٹورنامنٹ افریقن کپ آف نیشنز کا ایک رنگا رنگ تقریب میں آغاز ہو گیا ہے۔

سنیچر کو جوہانسبرگ کے سوکر سٹی سٹیڈیم میں منعقدہ رنگا رنگ تقریب میں افریقہ کے روایتی رقص پیش کیے گئے۔

چالیس منٹ تک جاری رہنے والی اس تقریب کے دوران فنکاروں نے رقص کے ذریعے براعظم افریقہ میں قحط، ناخواندگی اور بیماریوں جیسے درپیش مسائل کو اجاگر کیا۔

اس تقریب میں لکڑی سے تیار کیے جانے والے ایک لڑکے کی کٹھ پتلی جس کے پاؤں میں فٹبال تھا نے خاص توجہ حاصل کی۔

اس موقع پر سٹیڈیم میں موجود شائقین سے کہا گیا کہ وہ باجے بجانا بند کریں کیونکہ افریقین یونین کا ترانہ گایا جانا ہے۔

فٹبال ٹورنامنٹ کے پہلے روز کھیلے جانے والے دونوں میچ بغیر کسی گول کے برابر رہے۔

افریقن کپ آف نیشنز کا انعقاد لیبیا میں ہونا تھا تاہم بعد میں اسے جنوبی افریقہ منتقل کر دیا گیا۔

جنوبی افریقہ جو سال دو ہزار دس میں فٹبال کے عالمی کپ کا میزبان تھا، اس ٹورنامنٹ میں میچ انہیں سٹیڈیمز میں کھیلے جائیں گے جو عالمی کپ کے لیے تیار کیے گئے تھے۔

افتتاحی تقریب کے بعد کھیلے جانے والے دو میچوں میں میزبان جنوبی افریقہ کا مقابلہ کیپ میں پہلی بار حصہ لینے والے ملک کیپ ورڈی سے تھا جبکہ دوسرے میچ میں انگولا اور مراکش مدمقابل تھے۔

خیال رہے کہ اس ٹورنامنٹ میں سولہ افریقی ممالک شرکت کر رہے ہیں۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔