مصباح اور اسد کی ذمہ دارانہ بلے بازی

آخری وقت اشاعت:  اتوار 3 فروری 2013 ,‭ 11:59 GMT 16:59 PST

مصباح الحق نے اسد شفیق کے ساتھ مل کر ٹیم کو مزید نقصان سے بچایا

جوہانسبرگ میں سیریز کے پہلے ٹیسٹ میچ میں پاکستان کو فتح کے لیے مزید دو سو ستانوے رنز درکار ہیں جبکہ اس کی چھ وکٹیں ابھی باقی ہیں۔

پیر کو اس ٹیسٹ میچ کا چوتھا دن ہے اور اس بات کا بھی امکان ہے کہ وانڈررز کے میدان پر بارش ہو جائے۔

میچ کے تیسرے دن جب کھیل ختم ہوا تو پاکستان نے اپنی دوسری اننگز میں چار وکٹوں کے نقصان پر 183 رنز بنائے تھے۔

کلِک میچ کا تفصیلی سکور کارڈ

پاکستانی اننگز کی خاص بات کپتان مصباح الحق اور اسد شفیق کی ذمہ دارانہ بلے بازی تھی۔

ان دونوں بلے بازوں نے اب تک سو رنز سے زائد کی شراکت قائم کی ہے اور آؤٹ نہیں ہوئے ہیں۔

اس دوران اسد شفیق نے نصف سنچری بھی مکمل کی ہے۔ جب کھیل ختم ہوا تو وہ 53 جبکہ مصباح الحق 44 رنز پر ناٹ آؤٹ تھے۔

دوسری اننگز میں پاکستان کے آؤٹ ہونے والے کھلاڑیوں میں محمد حفیظ نے 2، ناصر جمشید نے 46 ، اظہر علی 18 اور یونس خان نے 15 رنز بنائے۔

اس ٹیسٹ میچ میں جنوبی افریقہ نے اپنی پہلی اننگز میں 253 رنز بنائے تھے جس کے جواب میں پاکستانی ٹیم صرف 49 رنز بنا کر آؤٹ ہوگئی تھی جو پاکستان کا کسی بھی ٹیسٹ اننگز میں سب سے کم سکور ہے۔

جنوبی افریقہ نے اپنی دوسری اننگز میں تین وکٹوں کے نقصان پر دو سو پچھہتر رنز بنا کر ڈیکلیئر کر دی تھی اور پاکستان کو فتح کے لیے چار سو اسی رنز کا ہدف دیا تھا۔

اسی بارے میں

متعلقہ عنوانات

BBC © 2014 بی بی سی دیگر سائٹوں پر شائع شدہ مواد کی ذمہ دار نہیں ہے

اس صفحہ کو بہتیرن طور پر دیکھنے کے لیے ایک نئے، اپ ٹو ڈیٹ براؤزر کا استعمال کیجیے جس میں سی ایس ایس یعنی سٹائل شیٹس کی سہولت موجود ہو۔ ویسے تو آپ اس صحفہ کو اپنے پرانے براؤزر میں بھی دیکھ سکتے ہیں مگر آپ گرافِکس کا پورا لطف نہیں اٹھا پائیں گے۔ اگر ممکن ہو تو، برائے مہربانی اپنے براؤزر کو اپ گریڈ کرنے یا سی ایس ایس استعمال کرنے کے بارے میں غور کریں۔