برازیل:فٹبال سٹیڈیم کا افتتاح اور’نقائص‘

برازیل کے شہر ریو ڈی جنیرو کا مشہورِ زمانہ مرکانہ فٹبال سٹیڈیم 3 سال کی تزئین و آرائش کے بعد سنہ 2014 کے عالمی کپ کی تیاریوں کے لیے دوبارہ کھول دیا گیا۔

اس فٹبال سٹیڈیم کی تزئین و آرائش کے لیے جن کارکنوں اور ان کے خاندان والوں نے حصہ لیا ان کی عزت افزائی کے لیے برازیل کی قومی ٹیم کے سابق اور موجود کھلاڑیوں کی ٹیموں کے درمیان ایک نمائشی میچ کا انعقاد کیا گیا۔

دوسری جانب برازیل کے بڑے اخبارات نے اس نئے سٹیڈیم کے حوالے سے کچھ نقائص کا ذکر کیا ہے۔

واضح رہے کہ یہ سٹیڈیم اپنے افتتاح کی مقررہ تاریخ میں ہونے والی تاخیر، اس پر آنے والی لاگت اور مستقبل میں نجکاری کے حوالے سے تنازعات کا شکار رہا۔

اس سٹیڈیم کی تزئین و آرائش کا کام مقررہ تاریخ سے چار ماہ بعد تکمیل کو پہنچا۔

اس کے افتتاح کی تاریخ سے چند دن قبل وہاں کرسیاں لگانے اور فرش بچھانے کا کام جاری رہا۔

برازیل کے صدر اور ریو ڈی جنیرو کے میئر نے 30,000 تماشائیوں کے ہمراہ مشہور فٹبال کھلاڑیوں رونالڈو اور بیبیٹو کی ٹیموں کے درمیان ہونے والے میچ کو دیکھا۔

یاد رہے کہ برازیل میں سنہ 2014 کے فٹ بال کے عالمی کپ کے مقابلے منعقد کیے جائیں گے جو 12 جون سے 13 جولائی 2014 کے درمیان منعقد کیا جائے گا۔

برازیل فٹبال کے عالمی مقابلوں کی دوسری بار میربانی کرے گا اس سے پہلے وہ 1950 میں ان مقابلوں کی میزبانی کر چکا ہے۔

اسی طرح سنہ 2016 کے اولمپکس مقابلے بھی برازیل کے شہر ریو ڈی جنیئرو میں منعقد ہوں گے جس کے لیے تیاریاں جاری ہیں۔

اسی بارے میں