نجم سیٹھی کی تقرری عدالت میں چیلنج

نجم سیٹھی
Image caption نجم سیٹھی آئی سی سی کے اجلاس میں شرکت کے لیے بدھ کے روز لندن روانہ ہونے والے ہیں

سابق وکٹ کیپر کپتان راشد لطیف نے پاکستان کرکٹ بورڈ کے عبوری چیئرمین کی حیثیت سے نجم سیٹھی کی تقرری کو عدالت میں چیلنج کرنے کا فیصلہ کیا ہے اور وہ بدھ کے روز سندھ ہائی کورٹ میں پٹیشن دائر کرنے والے ہیں۔

یاد رہے کہ راشد لطیف کی دو پٹیشنز پہلے ہی عدالت میں زیِرسماعت ہیں۔

راشد لطیف نے بی بی سی کو بتایا کہ اسلام آباد ہائی کورٹ نے پاکستان کرکٹ بورڈ کا آئین معطل نہیں کیا ہے صرف چیئرمین ذ کااشرف کو کام سے روکتے ہوئے عبوری طور پر چیئرمین مقرر کرنے کےلیے کہا تھا۔

کرکٹ بورڈ کے آئین میں واضح طور پر یہ بات موجود ہے کہ اگر چیئرمین پنتالیس دن سے زائد وقت کے لیے ذمہ داری نبھانے کی پوزیشن میں نہ ہو تو پاکستان کرکٹ بورڈ کے گورننگ بورڈ میں سے ہی کسی کو عبوری چیئرمین بنایا جاسکتا ہے اور یہ نکتہ بھی کرکٹ بورڈ کے آئین میں موجود ہے کہ چیئرمین اگر چاہے تو وہ گورننگ بورڈ کے رکن یا چیف آپریٹنگ آفیسر کو اپنےاختیارات منتقل کرسکتا ہے ۔

راشد لطیف نے کہا کہ وہ نجم سیٹھی کی تقرری کو عدالت میں چیلنج کرنے کے ساتھ ساتھ اسلام آْباد ہائی کورٹ کے فیصلے پر بھی نظرثانی کی درخواست دائر کریں گے۔

نجم سیٹھی آئی سی سی کے اجلاس میں شرکت کے لیے بدھ کے روز لندن روانہ ہونے والے ہیں اور وطن واپسی پر وہ ویسٹ انڈیز کے دورے کے لیے پاکستانی کرکٹ ٹیم کی منظوری بھی دیں گے۔

اسی بارے میں