اقبال قاسم سلیکشن کے معاملات سے الگ

پاکستان کے سابق ٹیسٹ کرکٹر اقبال قاسم نے پاکستان کرکٹ بورڈ کو مطلع کردیا ہے کہ وہ چیف سلیکٹر کے عہدے پر مزید برقرار رہنا نہیں چاہتے۔

اقبال قاسم نے بی بی سی کو دیئے گئے انٹرویو میں وضاحت کی کہ انھوں نے استعفی نہیں دیا بلکہ ان کی میعاد مکمل ہوگئی ہے اور اب وہ مزید یہ ذمہ داری نبھانے کے لیے تیار نہیں ہیں۔

دلچسپ بات یہ ہے کہ اقبال قاسم کے عہدے کی معیاد 31 جولائی کو ختم ہو رہی ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ انھوں نے بدھ کو پاکستان کرکٹ بورڈ کے عبوری چیئرمین نجم سیٹھی کو اس بارے میں آگاہ کر دیا تھا۔

اقبال قاسم نے کہا ’میں نے کرکٹ بورڈ کے سابق چیئرمین ذکا اشرف کو بھی یہی بات کہی تھی لیکن انھوں نے مجھے جاری رکھنے کو کہا تھا تاہم اب میں نے عبوری چیئرمین سے معذرت کر لی ہے‘۔

نامہ نگار عبدالرشید شکور کے مطابق اقبال قاسم کی سربراہی میں قائم کرکٹ بورڈ کی سلیکشن کمیٹی نے بدھ کو ویسٹ انڈیز کے دورے کے لیے پاکستان کی ٹیم منتخب کی تھی۔

اقبال قاسم نے کہا کہ انہوں نے ہرممکن کوشش کی کہ وہ اپنے عہدے سے انصاف کرتے ہوئے دیانت داری اور میرٹ پر ٹیم کا انتخاب کریں۔

حالیہ دنوں میں سلیکشن کمیٹی اور کپتان کے درمیان بعض کھلاڑیوں کے سلیکشن پر اختلاف رائے رہا ہے تاہم بدھ کو ایک مشترکہ پریس کانفرنس میں کپتان مصباح الحق نے یہ بات واضح کردی تھی کہ ویسٹ انڈیز کے دورے کے لیے ٹیم متفقہ طور پر منتخب کی گئی ہے۔

اسی بارے میں