لیہمن کی آسٹریلوی بلے بازوں کو تنبیہ

Image caption حالیہ ایشز سیریز میں آسٹریلیا کی بیٹنگ لائن چار ٹیسٹ میچوں کی آٹھ اننگز میں صرف ایک بار ہی 300 کا ہندسہ پار کر سکی

آسٹریلیا کی کرکٹ ٹیم کے کوچ ڈیرن لیہمن نے انگلینڈ کے ہاتھوں ایشز سیریز ہارنے کے بعد آسٹریلوی بلے بازوں پر تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ چند کھلاڑیوں کا کیرئیر اب داؤ پر لگ چکا ہے۔

ڈیرن لیہمن سے جب پوچھا گیا کہ کیا انبلے بازوں کا کیرئیر خطرے میں ہے تو انھوں نے کہا کہ اس میں کوئی غلط بات نہیں ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ بلے بازوں کو سیکھنا پڑے گا اور اگر وہ نہیں سیکھتے تو ہم ان کا متبادل تلاش کریں گے۔

انگلینڈ نے ایشز سیریز جیت لی

آسٹریلیا کے شین واٹسن، عثمان خواجہ، سٹیون سمتھ، ایڈورڈ کون اور فلپ ہیوز پوری سیریز میں زیادہ رنز سکور کرنے میں ناکام رہے۔

ڈیرن لیہمن نے کہا ’آسٹریلیا کی جانب سے کھیلتے ہوئے بلے بازوں کو ایک خاص معیار کی کاررکردگی کا مظاہرہ کرنا پڑتا ہے جو ہماری ٹیم، ہماری قوم اور ہمارے میڈیا میں ہر کسی کے لیے قابلِ قبول ہو۔‘

انھوں نے کہا کہ ’اس وقت ہمارے بلے باز ایسی کارکردگی نہیں دکھا رہے ہیں اور انھیں ہماری امیدوں کے مطابق اپنی کارکردگی دکھانی ہوگی۔‘

آسٹریلوی ٹیم کے کوچ نے کہا ’ہمیں اپنی غلطیوں سے سیکھنا ہو گا، ہم نے ٹرینٹ برج ٹیسٹ کے بعد اپنی غلطیوں سے کوئی سبق حاصل نہیں کیا‘۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ ڈرہم ٹیسٹ کی دوسری اننگز میں عمدہ آغاز کے بعد وہ پر امید تھے کہ آسٹریلیا یہ میچ جیت جائے گا تاہم بعد میں آنے والے بلے بازوں نے غلط شارٹس کا انتخاب کیا۔

خیال رہے کہ ڈیرن لیہمن کو ایشز سیریز شروع ہونے سے سولہ دن قبل مکی آرتھر کی جگہ آسٹریلیا کا کوچ مقرر کیا گیا تھا۔

انگلینڈ میں جاری حالیہ ایشز سیریز کے پہلے دو ٹیسٹ میچوں میں آسٹریلیا کو شکست کا سامنا کرنا تھا جبکہ مانچسٹر میں کھیلا جانے والا سیریز کا تیسرا ٹیسٹ میچ بےنتیجہ رہا تھا۔ ایشز سیریز کے چوتھے کرکٹ ٹیسٹ میں انگلینڈ نے آسٹریلیا کو 74 رنز سے شکست دے دی۔

ڈرہم میں کھیلے جانے والے میچ میں آسٹریلیا کو فتح کے لیے 299 رنز کا ہدف ملا لیکن اس کی پوری ٹیم 224 رنز بنا کر پویلین لوٹ گئی۔

299 رنز کے ہدف کے تعاقب میں آسٹریلیا کو اچھا آغاز ملا اور اوپنرز ڈیوڈ وارنر اور کرس راجرز نے پہلی وکٹ کی شراکت میں 109 رنز بنائے۔

ایک موقع پر آسٹریلیا کے 168 رنز پر صرف دو کھلاڑی آؤٹ ہوئے تھے اور یوں لگ رہا تھا کہ آسٹریلیا یہ میچ جیتنے کی پوزیشن میں ہے تاہم اس موقع پر سٹورٹ براڈ نے تباہ کن بولنگ کا مظاہرہ کیا اور اپنی ٹیم کو میچ میں واپس لے آئے۔

ڈرہم ٹیسٹ کی دوسری اننگز میں آسٹریلیا کے پانچ کھلاڑی عثمان خواجہ، مائیکل کلارک، سٹیون سمتھ، شین واٹسن اور برید ہیڈن نےملکر صرف 50 رنز بنائے۔

پانچ ٹیسٹ میچوں پر مشتمل سیریز میں اب انگلینڈ کو تین صفر کی فیصلہ کن برتری حاصل ہوگئی ہے۔

حالیہ ایشز سیریز میں آسٹریلیا کی بیٹنگ لائن چار ٹیسٹ میچوں کی آٹھ اننگز میں صرف ایک بار ہی 300 کا ہندسہ پار کر سکی۔

اسی بارے میں