’عالمی کپ میں برصیغر کی ٹیموں کو ہرانا مشکل‘

Image caption تندولکر 198 ٹیسٹ میچوں میں 15,837 رنز بنانے کے علاوہ کرکٹ کے عالمی کپ کے 45 میچوں میں 2,278 رنز بنا چکے ہیں۔

ایک روزہ کرکٹ میں سب سے زیادہ رنز بنانے والے بھارتی بلے باز سچن تندولکر کو امید ہے کہ سنہ 2015 میں آسٹریلیا اور نیوزی لینڈ میں منعقد ہونے والے کرکٹ کے عالمی کپ میں برصغیر کی ٹیموں کو ہرانا مشکل ہو گا۔

چالیس سالہ تندولکر نے ایک تقریب میں بات کرتے ہوئے سنہ 2015 کے عالمی کپ کے لیے بھارت، پاکستان اور سری لنکا کی ٹیمیں کو اچھی ٹیمیں قرار دیا۔

تندولکر کا کہنا تھا کہ ان تینوں ٹیموں کے متعدد کھلاڑی آسٹریلیا میں کھیل چکے ہیں اور انھیں وہاں کے موسم اور پچوں کا اندازہ ہے۔

بھارت کے مایہ ناز بلے باز تندولکر اس بات کو تسلیم کرتے ہیں کہ نیوزی لینڈ کے موسمی حالات میں بھارتی کھلاڑیوں کو ایڈجسٹ ہونے میں مشکل ہو گی۔

تندولکر کو امید ہے کہ بھارت کی ٹیم میں کرکٹ کے عالمی کپ کو دفاع کرنے کی پوری صلاحیت ہے اور وہ یہ کارنامہ سر انجام دینے والی تیسری ٹیم بن سکتی ہے۔

سچن تندولکر گزشتہ سال ایک روزہ کرکٹ میچوں سے ریٹائر ہو گئے تھے، انھوں نے اپنے ایک روزہ کیرئیر میں 18,426 رنز بنائے۔

بھارتی بلے باز 198 ٹیسٹ میچوں میں 15,837 رنز بنانے کے علاوہ کرکٹ کے عالمی کپ کے 45 میچوں میں 2,278 رنز بنا چکے ہیں۔

خیال رہے کہ اس سے قبل آسٹریلیا اور ویسٹ انڈیر کی ٹیمیں کرکٹ کے عالمی کپ کا کامیابی سے دفاع کر چکی ہیں۔

آسٹریلیا نے سنہ 1999 سے 2007 تک کے عالمی کپ کا دفاع کیا تھا جبکہ ویسٹ انڈیز یہ کارنامہ سنہ 1975 اور 1979 میں سرانجام دے چکی ہے۔

سنہ 2015 کے عالمی کپ کا آغاز چودہ فروری کو نیوزی اور سری لنکا کے درمیان کرائیسٹ چرچ میں کھیلے جانے والے میچ سے ہو گا۔

اسی بارے میں