دبئی:بال ٹیمپرنگ پر فاف ڈوپلیسی کو جرمانہ

Image caption اظہر علی صرف انیس رنز سکور کر سکے

دبئی میں پاکستان اور جنوبی افریقہ کے درمیان جاری دوسرے ٹیسٹ میچ کے ریفری ڈیوڈ بون نے بال ٹیمپرنگ کے معاملے میں جنوبی افریقہ کے کھلاڑی فاف ڈوپلیسی پر جرمانہ عائد کر دیا ہے۔

چوتھے دن کے کھیل کے آغاز سے قبل قبل فیصلہ سناتے ہوئے ڈیوڈ بون کا کہنا تھا کہ ڈوپلیسی نے میچ کے تیسرے دن اپنی جیب کی زپ پر گیند کو رگڑا تاہم ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ وہ اس بات پر مطمئن ہیں کہ انہوں نے جان بوجھ کر ایسا نہیں کیا۔

سنیچر کو آئی سی سی کی جانب سے جاری کیے جانے والے ایک بیان کے مطابق ڈوپلیسی کو اپنی میچ فیس کا 50 فیصد بطور جرمانہ ادا کرنا ہوگا۔

خیال رہے کہ دبئی میں دوسرے کرکٹ ٹیسٹ میچ کے تیسرے دن چائے کے وقفے کے بعد امپائرز نے جنوبی افریقہ کی جانب سے بال ٹیمپرنگ کرنے پر گیند تبدیل کی اور پاکستان کو پانچ رنز دیے تھے۔

امپائرز نے جنوبی افریقہ کی ٹیم پر یہ پنلٹی اس وقت عائد کی جب ڈوپلیسی نے اپنی جیب کی زپ پر گیند کو رگڑا۔

ٹی وی امپائرز کی جانب سے نشاندہی کے بعد گراؤنڈ امپائرز ایئن گولڈ اور روڈ ٹکر نے جنوبی افریقہ کے کپتان گریم سمتھ کو بلا کر ان سے بات چیت کی جس کے بعد گیند تبدیل کر دی گئی۔

جمعرات کو تیسرے دن کے کھیل کے خاتمے کے بعد میچ ریفری ڈیوڈ بون نے اس معاملے کی سماعت کی تھی جس میں ڈوپلیسی نے بال ٹیمپرنگ کا الزام قبول کیا تھا۔

اس سے قبل تیسرے روز کے کھیل کے بعد جنوبی افریقہ کے کھلاڑی اے بی ڈی ویلیئرز نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا تھا کہ ’جنوبی افریقہ کی ٹیم بے ایمان نہیں ہے‘۔

اے بی ڈی ویلیئرز نے کہا ’سچائی تو یہ ہے کہ ہم وہ ٹیم نہیں جو گیند کو سکریچ کرے۔ ہم بے ایمانی نہیں کرتے۔ میں ڈو پلیسی کو بہت اچھی طرح جانتا ہوں اور وہ ایسی حرکت کرنے والا آخری کھلاڑی ہو گا‘۔

ڈو پلیسی جنوبی افریقہ کی ٹی ٹوئنٹی ٹیم کے کپتان بھی ہیں۔

ڈی ویلیئرز نے کہا کہ ڈوپلیسی کی ذمہ داری تھی کہ وہ گیند کی چمک برقرار رکھے۔ ’یہ اتنا آسان کام نہیں ہے اور میرے خیال میں اس نے اپنی ذمہ داری بخوبی نبھائی‘۔

ڈی ویلیئرز نے کہا کہ انہیں نہیں معلوم کہ امپائرز کو کب یہ لگا کہ بال کی ٹیمپرنگ کی جا رہی ہے۔ ’اس بارے میں کوئی بات نہیں کی گئی، نہ ہی کوئی وارننگ۔ یہ سب اچانک ہوا‘۔

آئی سی سی نے حال ہی میں بال ٹیمپرنگ کے قوانین میں تبدیلی کی ہے۔ نئے قوانین کے تحت اگر بال ٹیمپرنگ میں کسی کھلاڑی کی نشاندہی ہو جاتی ہے تو گیند کو تبدیل کر کے دوسری ٹیم کو پانچ رنز دے دیے جائیں گے اور بال ٹیمپرنگ کرنے والے کھلاڑی کی رپورٹ کی جائے گی۔

اسی بارے میں