سچن کرکٹ کی تاریخ کے عظیم کھلاڑی ہیں: لارا

سچن
Image caption سچن نے 16 برس کی عمر میں اپنا پہلا ٹیسٹ کھیلا

ویسٹ انڈیز کے مایہ ناز کھلاڑی برائن لارا کا کہنا ہے کہ سچن تندولکر کو تاریخ میں ایک عظیم کھلاڑی کی حیثیت سے یاد رکا جائے گا۔

40 سالہ سچن اپنا 200 واں اور آخری ٹیسٹ میچ جمعرات کو اپنے آبائی شہر ممبئی میں ویسٹ انڈیز کے خلاف کھیلیں گے۔

بھارتی بلے باز سچن تندولکر نے بین الاقوامی کرکٹ میں سب سے زیادہ رنز بنائے ہیں۔

تندولکر ابھی مزید کھیل سکتے تھے: گواسکر

’ایک بچہ جو ابھی بھی یاد ہے‘

سچن تندولکر کے عالمی ریکارڈ

انہوں نے اب تک 199 بین الاقوامی ٹیسٹ میچوں میں 15847 رنز جبکہ 663 بین الاقوامی ون ڈے میچوں میں 18426 رنز بنائے ہیں۔

برائن لارا کا کہنا تھا: ’ کسی بھی دوسرے کھلاڑی کی نسبت سچن کا کرکٹ کیریئر سب سے اعلیٰ ہے۔‘

44 سالہ لارا اور سچن کے ریکارڈز لگ بھگ ایک جیسے ہیں۔ 131 میچوں میں لارا کی اوسط 53 رہی جبکہ تندولکر اوسط کے لحاظ سے 53 سے ذرا سا آگے ہیں۔

اگرچہ تندولکر نے 16 برس کی عمر میں اپنا پہلا ٹیسٹ میچ کھیلا تھا، وہ اپنے کیریئر کا اختتام لارا سے 96 زیادہ میچ کھیل کر کر رہے ہیں۔

گذشتہ برس تندولکر بین الاقوامی میچوں میں سو سنچریاں بنانے والے پہلے کھلاڑی بنے اور جمعرات کو وہ پہلے کھلاڑی بن جائیں گے جس نے 200 ٹیسٹ میچ کھیلے ہیں۔

لارا کا مزید کہنا تھا: ’ان کا کرکٹ کے کھیل، اپنے ملک اور باقی دنیا پر ناقابلِ یقین اثر ہے۔‘

’ان کے اعداد وشمار خود بولتے ہیں۔ میرا نہیں خیال کہ کوئی اور 16 برس کا نوجوان ایسا کیریئر بنائے گا اور 40 برس کی عمر میں اسے اس طرح خیرباد کہے گا جیسے سچن نے کیا۔‘

’وہ اپنے کھیل کے محمد علی اور مائیکل جورڈن ہیں۔ جب آپ عظیم باکسر اور باسکٹ بال کھلاڑیوں کا سوچتے ہیں تو ان کے نام ذہن میں آتے ہیں لیکن اگر آپ کرکٹ کی بات کریں گے تو آپ ضرور سچن کے بارے میں بات کریں گے۔‘

اسی بارے میں